News Detail Banner

کرپٹ اشرافیہ اور فرسودہ نظام نے تیل گیس کوئلہ اور زراعت کی دولت سے مالا مال سندھ کو تباہ اور ملک کے پورے سسٹم کو ناکارہ بنادیا ہے۔لیاقت بلوچ

10مہا پہلے

لاہور16 جولائی 2023

نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان و سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے ملک میں سیاسی و معاشی استحکام کے لیے بروقت صاف و شفاف اور غیر جانبدارانہ قومی انتخابات کے انعقاد پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ کرپٹ اشرافیہ اور فرسودہ نظام نے تیل گیس کوئلہ اور زراعت کی دولت سے مالا مال سندھ کو تباہ اور ملک کے پورے سسٹم کو ناکارہ بنادیا ہے۔ سیاسی قیادت کو قومی ڈائلاگ کے ذریعے قومی ترجیحات پر مل بیٹھ کر ملک کو بحرانوں سے نکال کر ترقی کی شاہراہ پر گامزن کرنا ہوگا۔ جماعت اسلامی نے اتحادی سیاست کا قصہ تمام کردیاہے آئندہ انتخابات میں اپنے منشور اور نشان سے حصہ اور سندھ سمیت قوم کو دیانتدار مخلص اور اہل قیادت منتخب کرنے کا موقع دے گی۔ ہماری ترجیح اسلام و پاکستان اور عوام کی فلاح وخدمت ہے۔9 مئی کے سانحات پر پوری قوم رنجیدہ ہے ملک کو بدنام اور افواج پاکستان کی تذلیل کرنے والوں اور اس کے ماسٹر مائنڈ کسی رعایت کے مستحق نہیں ہیں مگر اس کی آڑ میں پولیٹیکل انجینرنگ کی اجازت نہیں دی جاسکتی۔ حکمرانوں نے اسٹیبلشمنٹ کے ساتھ ملکر انتخابات سے راہ فرار اختیار اور سیاسی انجنئیرنگ کرنے کی کوشش کی تو جماعت اسلامی بھرپور مزاحمت کرے گی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے حیدرآباد میں جماعت اسلامی سندھ کے تحت لوئرسندھ کے انتخابی کنونشن سے صدارتی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ کنونشن سے مرکزی نائب امر اء اسداللہ بھٹو، ڈاکٹر فرید احمد پراچہ، صوبائی امیر محمد حسین محنتی، نائب امیر ممتاز حسین سہتو، جنرل سیکریٹری کاشف سعید شیخ، جے آئی یوتھ سندھ کے صدر امتیازاحمد پالاری،جمعیت سندھ کے ناظم مرزا نعمان بیگ نے بھی خطاب کیا جبکہ امراء  اضلاع نے اپنے نامز امیدواران کا تعارف پیش کیا۔کنوشن میں قیمہ پاکستان دردانہ صدیقی، ناظمہ صوبہ رخشندہ منیب، جماعت اسلامی کے نامزد قومی و صوبائی اسمبلیوں کے مردوخواتین امیدواران، ضلعی عہدیداران اقلیتی ذمے داران شریک تھے۔لیاقت بلوچ کا مزید کہنا تھاکہ جماعت اسلامی ترازو نشان پر پورے پاکستان سے 50 لاکھ ووٹ لینے کا ہدف رکھتی ہے۔ہر جدوجہد وقت مال اور جان کی قربانی چاہتی ہے۔جماعت اسلامی نے ہر کارکن پر کم از کم 20 ہزار روپے الیکشن فنڈ مقرر کیا ہے۔جماعت اسلامی نے عام انتخابات میں 40 فیصد نوجوان اور 5 فیصد خواتین امیدواران کو نامزکیا ہے۔انہوں نے زور دیا کہ دستک مہم کے ذریعے گھر گھر جا کر عوام الناس تک جماعت کی دعوت و پیغام پہنچائیں کہ ملک میں حقیقی تبدیلی اور ملک و قوم کے مسائل کا حل صرف جماعت اسلامی ہے۔ ہمارا ایمان ہے کہ پاکستان قیامت کی صبح تک قائم دائم رہے گا۔

مرکزی نائب امیر اسداللہ بھٹو نے کہاکہ پاکستان میں اسلامی نظام کا نفاذ ہماری زندگی کا مقصد ہے۔اپنا اور خاندان سمیت ووٹر لسٹ میں نام کے اندراج کو یقینی بنایا جائے۔لوگوں کو بتایا جائے کہ ہمارے بچوں اور ملک کا مستقبل ووٹ کی طاقت سے وابستہ ہے۔                                                       مرکزی نائب امیر ڈاکٹر فرید احمد پراچہ نے کہاکہ ہم اسلامی خوشحال پرامن کرپشن فری پاکستان اور قرضوں سے پاک معیشت چاہتے ہیں۔ ہم اقتدار میں آکر جمعہ کی چھٹی بحال،نوجوان کو پچاس لاکھ تک کاروبار کے لیے قرضہ، 300 یونٹ تک بجلی مفت،فوج کی سیاست میں مداخلت ختم اور وڈیرہ شاہی و جاگیرداری نظام کو جڑ سے اکھاڑ دیں گے۔جماعت اسلامی سندھ کے امیر محمد حسین محنتی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پیپلز پارٹی کے وڈیرہ شاہی دور میں اس وقت سندھ میں ڈاکو راج قائم ہے۔ کسی بھی شہری کی جان و مال محفوظ نہیں کشمور سمیت پورا سندھ بدامنی کی لپیٹ میں ہے۔ کراچی میں جماعت اسلامی کے میڈیٹ پر پیپلزپارٹی کی سندھ حکومت نے شب خون مارا ہے عام انتخابات میں عوام جماعت اسلامی کے نامزد امیدواروں کو کامیاب کرکے بدلہ لیں گے۔جماعت اسلامی لوگوں کی دنیا کے ساتھ آخرت بھی بنانا چاہتی ہے۔

نائب امیر صوبہ و ناظم انتخابات ایڈووکیٹ ممتازحسین سہتو نے کہاکہ جماعت اسلامی کا مقصد اللہ کی زمین پر اللہ کا نظام ہے، ہم میڈیا کے ذریعے اسلامی روایات کا تحفظ صحافیوں کی نوکری کا تحفظ کے ساتھ کارڈ جاری کیا جائے گا جس میں ان کو صحت سمیت دیگر سہولیات فراہم کی جائیں گی۔ جے آئی یوتھ سندھ کے صدر امتیازاحمد پالاری اور اسلامی جمعیت طلبہ سندھ کے ناظم مرزا نعمان بیگ نے کہاکہ جمعیت و یوتھ کے نوجون انتخابات میں تحریک اسلامی کا ہراول دستہ کا کردار ادا کریں گے۔