News Detail Banner

جماعت اسلامی 9جون کوانڈین ایمبیسی کی جانب تحفظ ناموس رسالت ﷺمارچ کرے گی،میاں اسلم مسلمان نبیﷺکی توہین پر کٹ مرنے کوتیارہوجاتاہے،مودی حکومت نے پونے دوارب مسلمانوں کے دل زخمی کئے

17دن پہلے

لاہور07 جون2022ء

نریندرمودی انسانیت اوراسلام کادشمن ہے وہ خودکوکسی عالمی قانون کے تابع نہیں سمجھتا،ڈاکٹرطارق سلیم ودیگرکاپریس کانفرنس سے خطاب

نائب امیرجماعت اسلامی پاکستان وسابق ایم این اے میاں محمداسلم نے کہاہے کہ نریندرمودی کی انتہا پسندحکومت کی سرپرستی میں  محمدعربی ﷺکی شان میں گستاخی اوراسلام دشمنی کے خلاف جماعت اسلامی 9جون کوانڈین ایمبیسی کی جانب تحفظ ناموس رسالتؐ مارچ کرے گی جس کا آغاز5بجے آبپارہ سے ہوگا،امیرجماعت سراج الحق سمیت دیگررہنماقیادت کریں گے۔مذہبی،سیاسی،لسانی وابستگی سے بالاترہوکر ہرپاکستانی عاشق رسولؐ کواس میں شرکت کرنی چاہیے۔ان خیالات کااظہارانھوں نے امیر جماعت اسلامی پنجاب ڈاکٹرطارق سلیم کے ہمراہ ضلعی دفترمیں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا،اس موقع پر امیرضلع اسلام آباد نصراللہ رندھاوا،امیرضلع راولپنڈی سیدعارف شیرازی،صدر جیآئی لیبرمحمدکاشف چوہدری،مرکزی میڈیا کوآرڈینیٹر ایس اے شمسی،صوبائی سیکرٹری اطلاعات انعام الحق اعوان،بھی موجودتھے۔

میاں محمداسلم نے کہاکہ سقوط ہندوستان کے وقت سے مسلمانوں اوراقلیتی کمیونٹی پرظلم وستم کاسلسلہ جاری ہے لیکن انتہاپسندبی جے پی کی سابقہ اور موجودہ نریندرمودی کی حکومت نے مسلمانوں کاجینامشکل کردیاہے ان کی سٹیزن شپ تک ختم کرنے کے لیے اقدامات کئے جاتے ہیں،بنیادی انسانی حقوق پامال کرتے ہوئے دہشتگردتنظیم کے غنڈے ہماری عفت مآب مسلمان بیٹوں کی سروں سے حجاب کھینچتے، ان کی تذلیل کرتے ہیں اب حکومتی پارٹی کے عہدیدارپونے2ارب مسلمانوں کے دلوں کوزخمی کرنے کے لیے نبی اقدس ﷺکی شان میں گستاخی کررہے ہیں مسلمان سب کچھ برداشت کرسکتا ہے لیکن اپنے نبیؐکی توہین پروہ کٹ مرنے اورمارنے پرتیارہوجاتاہے، حکومتی سرپرستی میں محمدعربیؐکی شان میں گستاخی کی گئی اور گستاخ رسولؐ نوپورشرما کہتی ہے اسے ہندوستانی وزیراعظم اوروزیرداخلہ کی مکمل سرپرستی اور تعاون حاصل ہے۔9جون کوہندوستان ایمبیسی کی جانب مارچ ہوگا، 10جون کوگستاخی رسولؐ کے خلاف ملک گیراحتجاج کیاجائے گا۔

صوبائی امیرڈاکٹرطارق سلیم نے کہاکہ ہندوستانی حکومت کی جانب سے اوآئی سی اعلامیہ کومستردکرکے ہٹ دھرمی دکھانے سے ثابت ہوگیا کہ نریندرمودی انسانیت اوراسلام کادشمن ہے وہ خودکوکسی عالمی قانون کے تابع نہیں سمجھتا پوراعالم اسلام ہندوستان سے سفارتی اورتجارتی تعلقات ختم کرے اوران کی تمام پروڈکٹس کابائیکاٹ کیاجائے۔ 9جون کاانڈین ایمبیسی کی طرف تحفظ ناموس رسالتؐمارچ کسی ایک پارٹی نہیں بلکہ 22کروڑ عاشقان مصطفیؐ کی نمائندگی کرے گا۔ اس میں شرکت کسی ایک علاقے نہیں ہرپاکستان باغیر ت مسلمان کا فرض ہے، ہم مسلمانوں کے ساتھ اپنی اقلیتی پاکستانی برادری کوبھی دعوت دیتے ہیں کہ وہ بھی اس مارچ کاحصہ بنیں۔

صوبائی امیرنے کہاکہ گستاخان رسول بی جے پی ترجمانوں کے خلاف ممبئی اور مہاراشٹر میں ایف آئی آردرج ہوئیں لیکن دہشت گرد نریندرمودی انھیں تحفظ فراہم کررہاہے۔