Jamaat-e-Islami Pakistan |

کاغذ پر نقشے بنانے، سڑکوں کے نام تبدیل کرنے اور نئے نئے نغمے گانے سے کشمیر آزاد نہیں ہوگا،حافظ محمد ادریس


لاہور 7اگست 2020ئ
جماعت اسلامی کے مرکزی رہنما حافظ محمد ادریس نے کہا ہے کہ کاغذ پر نقشے بنانے، سڑکوں کے نام تبدیل کرنے اور نئے نئے نغمے گانے سے کشمیر آزاد نہیں ہوگا اگر حکمرانوں کے اندر کوئی غیر ت و حمیت ہے تو جہاد کا اعلان کریں ۔غیر ت ایمانی سے سرشار نوجوان کشمیری ماﺅں بہنوں بیٹیوں کی عصمتوں کی حفاظت کیلئے اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کرنے کیلئے تیار ہیں ۔ 1947ءمیں جنرل گریسی کو فوج کی کمان نہ دی ہوتی اور قبائلی مجاہدین کو آگے بڑھنے سے روکانہ جاتا تو آج برصغیر پاک و ہند کی تاریخ اور جغرافیہ مختلف ہوتا۔جو حکمران امریکی و مغربی آقاﺅں سے پوچھ کر ہر قدم اٹھاتے ہوں وہ اسلام اور مسلمانوں کے نمائندے نہیں ہوسکتے ۔لاکھوں مربع کلومیٹر پر پھیلی ہوئی تیل کی دولت سے مالا مال عرب دنیاکے سامنے یہودیوں نے فلسطین پر قبضہ کیا مگر عربوں کی غیرت نہیں جاگی ۔جب تک خوف خدا رکھنے والی دیانتدار قیادت نہیں آتی ملک کی نظریاتی اور جغرافیائی سرحدیں محفوظ نہیں ہوسکتیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جامع مسجد منصورہ میں جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔
حافظ محمد ادریس نے کہا کہ کشمیر کے نام پر حکمرانوں نے جو اودھم مچا رکھا ہے یہ کشمیریوں کی مدد کیلئے نہیں بلکہ پاکستانی قوم کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کی ناکام کوشش ہے ۔ایک طرف کشمیری پون صدی سے ہر طرح کی قربانیاں دے رہے ہیں ،ان کی تیسری نسل پاکستان پر قربان ہورہی ہے ،سید علی گیلانی اوردوسرے حریت رہنماﺅں نے اپنی زندگیاں بھارت کے ظلم و ستم سہتے ہوئے اورقید وبند کی صعوبتیں برداشت کرتے ہوئے گزار دیں مگر ان کے قدم ایک لمحے کیلئے نہیں ڈگمگائے جبکہ ہمارے حکمران بیانات ،تقریروں اور زبانی جمع خرچ سے آگے نہیں بڑھے ۔انہوں نے کہا کہ کشمیر کی آزادی کیلئے عملی اقدامات کی ضرورت ہے ۔قوم اگر ساتھ دے تو یہ کام صرف جماعت اسلامی کرسکتی ہے ۔ملک و قوم کو مسائل کی دلد ل سے نکالنے کیلئے نظام مصطفی ﷺ کے نفاذ کے علاوہ دوسرا کوئی حل نہیں ۔ 

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں




سوشل میڈیا لنکس