Jamaat-e-Islami Pakistan |

اہم خبریں

عید قربان سے قبل تمام کاروباری مراکز بند کرنا غیر دانشمندانہ فیصلہ ہے،ڈاکٹر ذکراللہ مجاہد


لاہور  29جولائی2020ء: امیر جماعت اسلامی لاہورمیاں ذکر اللہ مجاہد نے کہا ہے کہ عید قربان سے قبل تمام کاروبار مراکز بند کرنا غیر دانشمندانہ فیصلہ ہے۔ کرونا احتیاط ضروری مگر تاجر برادری کو اعتماد میں لیے بغیر مکمل لاک ڈاؤن کرنا ملکی معیشت کو کمزور کرنے کے مترادف ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پی پی 173کی سیاسی کونسل کے اجلاس میں عہدیداران سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں متوقع آئندہ بلدیاتی انتخابات کے حوالے سے تفصیلی جائزہ لیا گیا اور حکمت عملی طے کی گئی۔ اجلاس میں صدر سیاسی کمیٹی جماعت اسلامی علاقہ غربی لاہور چوہدری عبدالقیوم، امیر زون منصورہ چوہدری عبدالواحد، صدر الخدمت فاونڈیشن لاہور عبدالعزیز عابد، سیکرٹری زون نثار احمد عابد، سابق ممبر صوبائی اسمبلی چوہدری عبدالحمید، امان اللہ خان، اظفر اقبال بسرا، چوہدری طاہر رضا، فرحان سلیمی، لقمان باسط سمیت دیگر عہدیداران نے شرکت کی۔ میاں ذکر اللہ مجاہد نے کہا ہے کہ حکمرانوں کی ناکام پالیسیوں نے تاجر برداری سمیت تمام مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے افراد کو مشکلات سے دوچار کردیا ہے۔ حکومت کو چاہیے تو یہ تھا کہ عیدقربان کے موقع پر کرونا وبا سے بچاو کیلئے مکمل لاک ڈاون کی بجائے ایس او پیز جاری کرتی اور اس پر عمل درآمد کیلئے تمام وسائل کو بروائے کار لاتی اور جو حکومت کی جانب سے جاری کردہ ایس او پیز کی خلاف ورزی کرتا اس کے خلاف قانونی سخت کاروائی کی جاتی لیکن افسوس ایسا نہیں کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ عیدقربان سے چند روز قبل مکمل لاک ڈاون سے دیہاڑی دار طبقہ شدید متاثر ہوگا جبکہ پہلے ہی ملک میں غربت اور مہنگائی نے ڈھیرے جمائے ہوئے ہیں ایسے میں مذہبی تہوار کے موقع پر روزگار کے مواقع بند کرنا ناکام معاشی پالیسی ہے جس کے خلاف پنجاب بھر کی تاجر برداری سراپا احتجاج بنی ہوئی ہے۔ میاں ذکر اللہ مجاہد نے اس موقع پر اہلیان لاہور سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ عید قربان کے موقع پر صبر اور احتیاط کا دامن مت چھوڑیں اور کرونا سے بچاؤ کیلئے تمام حفاظتی تدابیر کو اپنا کر محب وطن شہری ہونے کا ثبوت دیں۔

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں




سوشل میڈیا لنکس