Jamaat-e-Islami Pakistan |

اہم خبریں

الخدمت فاؤنڈ یشن نے اب 29کروڑ کا راشن اور تیار کھانا پہنچایا ہے،سینیٹر سراج الحق


لاہور28مارچ2020ء
امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ کرونا نے انسانوں کو مارا ، عالمی معیشت کو تباہ کیا اور سائنس اور ٹیکنالوجی کو ناکام بنایا ہے ۔مصیبت کی اس گھڑی میں قوم کی خدمت کرنے والے فلاحی اداروں کے ان ہزاروں کارکنوں کا شکریہ ادا کرتے ہیں جو عوام میں راشن اور ضروری اشیاء تقسیم کررہے ہیں ۔ الخدمت فائونڈیشن نے اب تک لاک ڈائون والے علاقوں میں 29کروڑ کا راشن اور تیار کھانا پہنچایا ہے ۔علاوہ ازیں کروڑوں روپے کے آلات اور حفاظتی اشیاء ہسپتالوں کو دیں اور عوام میں تقسیم کی ہیں۔حکومت سرکاری و غیر سرکاری ہسپتالوں کو وینٹی لیٹرز کی فوری فراہمی کو یقینی بنائے ۔ سستے ماسک ،سینی ٹائزر اور صابن کا کھلا انتظام کرے ،ڈیلی ویجر،مزدوروں ،گھروں میں کام کرنے والے مردوں اور عورتوں کیلئے امدادی اور خوراک کے اعلان کردہ پیکیج پر عملدرآمد کروائے ،تمام ہسپتالوں میں کورونا کی تشخیص اور علاج کا انتظام کیا جائے ۔25ہزار روپے سے کم آمدن والوں کے بجلی و گیس کے بل معاف کرے ،سودکے مکمل خاتمہ کا فوری اعلان کرے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے الخدمت فائونڈیشن کے ہیڈکوارٹر میں ملک بھر میں عوام کی خدمت کے حوالے سے جاری سرگرمیوں اور حفاظتی سامان کی ترسیل پر ایک بریفنگ کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ جماعت اسلامی کے نیشنل فوکل پر سن ، ڈپٹی سیکرٹری جنرل اظہر اقبال حسن، نائب صدر الخدمت فائونڈیشن سید احسان اللہ وقاص ،سیکرٹری جنرل الخدمت فائونڈیشن شاہد اقبال، سیکرٹری اطلاعات قیصر شریف ،صدر الخدمت وسطی پنجاب اکرام سبحانی بھی اس موقع پر موجود تھے ۔ الخدمت فائونڈیشن کے صدر عبد الشکور نے امیر جماعت کو بریفنگ دی۔
سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ ملک میں سائنسدانوں اور قابل ترین ڈاکٹروں کی کوئی کمی نہیں مگر حکومتوں نے ان کو آگے بڑھنے اور اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوانے کا موقع دیا نہ ضروری سامان مہیا کیا جس کی وجہ سے آ ج ہم کورونا سے بچائو کیلئے کٹس ،ماسکس اور دستانوں جیسی معمولی چیزوں کیلئے بھی دوسروں کی طرف دیکھ رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے عوام کو مشکل اور پریشانی کی اس گھڑی میں تنہا چھوڑ دیا ہے ۔لوگوں کے پاس کھانے پینے کی اشیاء ختم ہورہی ہیں،حکومت کی طرف سے لوگوں کو راشن مہیا کیا جارہا ہے نہ کھانے پینے کا سامان خریدنے کیلئے ان کی مدد کی جارہی ہے ۔ستر لاکھ سے زیادہ مزدور گھروں میں فارغ بیٹھے حکمرانوں کی طرف دیکھ رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی عوام کی مشکلات اور پریشانیوں کو کم کرنے اور دکھوں کو بانٹنے کیلئے میدان میں ہے ۔ہمارے ہزاروں کارکن غریب آبادیوں میں تیار کھانا اور راشن پہنچا رہے ہیں۔ہمارے ہسپتال ،ڈسپنسریاں ،ڈاکٹرز دن رات عوام کی خدمت میں پیش پیش ہیں ۔ہم رضائے الٰہی کے حصول اور اپنے عوام کو اس مصیبت سے بچانے کیلئے عوام کے درمیان رہیں گے ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ کورونا سے بچنے کیلئے احتیاطی تدابیرکے ساتھ ساتھ اللہ کو راضی کرنے کی ضرورت ہے ۔ اس کا بہترین طریقہ رجوع الی اللہ ، تلاوت قرآن کریم اور رکوع سجود میں اللہ کی حمد و ثنا ء ہے ۔ لاک ڈائون کے دوران گھروں میں اپنے قرنطینہ ٹائم کو قرآن ٹائم بنائیں اپنے گھروالوں کے ساتھ مل کر روزانہ کم ازکم ایک پارے کی تلاوت کریں۔ اللہ تعالیٰ کی ناراضگی کو دور کرنے کیلئے خود اللہ تعالی نے جو راستہ ہمیں بتایا ہے اس پر چل کرہی ہم اس وباسے بچ سکتے ہیں ۔ احتیاط اور تدبیر انبیاء کی سنت ہے ۔عوام سرکاری احکامات اور ہدایات پر عمل کریں۔رجوع الی اللہ کیلئے قرنطینہ کو قرآن ٹائم بنائیں ۔گھروں میں قرآن کریم پڑھیں اورتوبہ و استغفار کریں ۔کورونا امتحان اور آزمائش ہے ۔جب بھی انسان نے اللہ کی حدود کو توڑا ہے اسے اللہ کے غضب کا سامنا کرنا پڑا ہے ۔اس وباء سے بچنے کا واحد راستہ رجوع الی اللہ ہے ۔ہماری حکومتوں اور عالم اسلام کو توبہ و استغفار کا راستہ اختیار کرنا چاہئے اور ادھر ادھر دیکھنے کی بجائے سچے دل سے توبہ کرنی چاہئے ۔نمرود کو اللہ تعالیٰ نے معمولی مچھر سے نشان عبرت بنا دیا تھا ،آج کے نمرودوں اور فرعونوں کا غرور اور تکبر اللہ تعالیٰ نے مچھر سے بھی حقیر ایک معمولی جرثومے کے ذریعے خاک میں ملا دیا ہے۔
 

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں




سوشل میڈیا لنکس