Jamaat-e-Islami Pakistan |

اہم خبریں

مساجد پر تالے، علماءکرام کیخلاف مقدمات اورنمازیوں کومسجد سے روکنا اللہ کے عذاب کو دعوت دینا ہے۔ محمدحسین محنتی


کراچی28  مارچ 2020 ء:جماعت اسلامی سندھ کے امیر وسابق ایم این اے محمد حسین محنتی نے مساجد پر تالے، علماءکرام کیخلاف مقدمات اور عام نمازیوں کو روکنے والے سندھ حکومت کے فیصلے کی مذمت کرتے ہوئے اسے عذاب الہٰی کو دعوت دینے کے مترادف قرار دیا ہے اور مطالبہ کیا ہے کہ قائم مقدمات ختم اور کورونا وائرس سمیت تمام مصیبتوں سے نجات کیلئے اوررجوع الی اللہ کیلئے مساجد کو عام نمازیوں کے لیے کھولا جائے،قوم جمعہ نمازپرپابندی اورمساجد کو تالے لگانے کے حکومتی فیصلے کو ہرگزقبول نہیں کرے گی۔ انہوں نے آج ایک بیان میں کہا کہ بلاشبہ کوروناوائرس کی وجہ سے پاکستان سمیت پوری دنیا اس وقت سخت آزمائش سے دوچار ہے دینی جماعتوں اور علماءکرام نے کورونا سے نجات وحفاظتی تدا بیر کیلئے منبرومحراب کے ذریعے نہ صرف عوام کو آگاہی اور حکومت کے ہر قدم کی حمایت وتائید کی مگر علماءکرام سے مشاورت کے بغیر علی الرغم جمعہ کے نماز پر پابندی اور مساجد کو تالے لگانے کا اعلان اللہ کے عذاب کو دعوت دینے کے مترادف ہے۔ کوئی بھی مصیبت آتی ہے تو انسان اپنے رب سے رجوع کرتا ہے ،یہ بھی قوم کے ساتھ کھلا مذاق ہے کہ تمام بڑے شاپنگ سینٹرتو کھلے ہیں اور اللہ کے گھر بند کئے جارہے ہیں۔سورہ بقرہ کی آیت نمبر 144میں ارشاد باری تعالیٰ ہے” اور اس شخص سے زیادہ اور کوئی ظالم نہ ہوگا جو اللہ تعالیٰ کی مساجد میں ان کا ذکر (اور عبادت) کئے جانے سے بندش کرے، ان لوگوں کو دنیا میں بھی رسوائی نصیب ہوگی اور ان کو آخرت میں بھی سزائے عظیم ہوگی۔“(القرآن) تاہم قرآن مجید ،احادیث مبارکہ اور محدثین کرام اور فقہا کرام کی عبارات سے یہ بات واضح ہوتی ہے کہ اگر کسی علاقے میں واقعتا کوئی وبا (کورونا وائرس وغیرہ) عام ہوجائے تو اس علاقے میں موجودہ مریضوں کو جماعت میں شریک نہیں ہونا چاہئے االبتہ عام لوگوں کو مسجد میں باجماعت نمازوں کا اہتمام کرنا ضروری ہوگااور اگر مسجد میں باجماعت نماز پورے محلے والوں نے ترک کردی تو پورا محلہ گنہگار ہوگا کیوں کہ مسجد کو نماز سے آباد رکھنا فرض کفایہ ہے۔اسلئے حکومت سندھ جمعہ ودیگر نمازوں پرپابندی،مساجد پر تالے اور لوگوں کو باجماعت نماز پڑھنے پر پابندی والے فیصلے پرفوری نظرثانی کرے تاہم حفاظتی تدابیر کے حوالے سے ضروری قدم اٹھائیں جائیں جس کیلئے مسجد کے پیش امام اور مسجد کمیٹی تعاون کرے گی۔

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں




سوشل میڈیا لنکس