Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

سینیٹرسراج الحق کا کوروناوائرس سے ”بچو اور بچاﺅ فرض بھی ، ذمہ داری بھی“ کے سلوگن کے ساتھ ملک گیر آگاہی مہم کا اعلان


لاہور18 مارچ2020ئ
امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کوروناوائرس سے ”بچو اور بچاﺅ فرض بھی ، ذمہ داری بھی“ کے سلوگن کے ساتھ ملک گیر آگاہی مہم کا اعلان کیا ہے۔رجوع الی اللہ کی تحریک میں احتیاط اور استغفار کرنے کے حوالے سے لٹریچر و دیگر ضروریات کا اہتمام کیا جائے گا۔ کورونا وائرس سے لوگوں کو بچانے اور بروقت علاج کی سہولت مہیا کرنے کے لیے حکومت سے مکمل تعاون کی پیشکش کرتے ہیں ۔ جماعت اسلامی اور الخدمت فاﺅنڈیشن کے تحت ملک بھر میں چلنے والے سینکڑوں ہسپتال ، ڈسپنسریاں ، ایمبولیسنز عملے سمیت ملک و قوم کے لیے حاضر ہیں، حکومت جیسے چاہے انہیں استعمال کرسکتی ہے ۔جماعت اسلامی نے مہنگائی اور بے روزگاری کے خلاف جاری مہم کو کورونا وائرس سے آگاہی اور صفائی کی مہم میں بدل دیاہے ۔ جماعت اسلامی کے ملک بھر میں موجود دفاتر کورونا آگاہی سنٹرز بنادیے گئے ہیں۔ حکومت سے اپیل کرتاہوں کہ غریبوں کے لیے بڑے امداد ی پیکیج کا اعلان کرے ۔ کروناوائرس نے جس طرح عالمی معیشت کو تباہ کردیاہے اسی طرح ملکی معیشت تباہ ، مارکیٹس بند اور کاروبار بھی ٹھپ ہوچکے ہیں ۔خاص طور پر دیہاڑی دار مزدور فاقہ کشی پر مجبور ہیں ۔ حکومت 25 ہزار سے کم آمدن والے شہریوں کو بجلی اور گیس کے بل معاف کردے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوںنے منصورہ میں مرکزی ذمہ داران کے اجلاس کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر ڈپٹی سیکرٹری جنرل اظہر اقبال حسن اور سیکرٹری اطلاعات قیصر شریف بھی موجود تھے ۔ جماعت اسلامی نے کورونا وائرس سے آگاہی کے لیے ڈاکٹروں کا ایک بورڈ بھی تشکیل دیاہے ، بورڈ کا فوکل پرسن اظہر اقبال حسن کو مقرر کیا گیاہے ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ وزیراعظم کے گزشتہ روز کے خطاب میں عوام کے لیے کوئی ریلیف نہیں تھا ، حقیقت میں انہوںنے خود لوگوں کو ڈرانے کے لیے مایوسی کی باتیں کیں ۔ اس موقع پر ضرورت اس بات کی تھی کہ لوگوں کو امید د لائی جاتی اور انہیں حوصلہ دیا جاتا ۔ قوم کے اند ر اجتماعیت پیدا کرنے اور ملکر اس قدرتی وبا سے لڑنے کی ترغیب دی جاتی ۔انہوںنے کہاکہ ہمارے وفود ملک بھر میں علمائے کرام ، سیاسی و سماجی رہنماﺅں سے ملاقاتیں کریں گے اور گلی محلے کی سطح پر عوام کے اندر موجود کورونا کا خوف دور کرنے اور انہیں صفائی ستھرائی اور احتیاطی تدابیر اختیار کرنے پر مائل کریں گے ۔ انہوںنے کہاکہ ہم مارکیٹ کمیٹیوں کے سربراہان ، بازاروں اور یونینز کے صدور سے رابطے کر کے انہیں ذخیرہ اندوزی اور ناجائز منافع خوری سے دکانداروں کو روکنے اور مصیبت کی اس گھڑی میں عوام کو زیادہ سے زیادہ ریلیف دینے کی اپیل کریں گے ۔ بڑی کمپنیوں کے مالکان سے بھی ضروریات زندگی کی ارزاں اور آسان فراہمی پر قائل کریں گے ۔ انتظامیہ کو بھی بازاروں اور مارکیٹوں کی صورتحال سے آگاہ رکھا جائے گا تاکہ عوام دشمن عناصر کو ناجائز منافع خوری سے روکا جاسکے ۔ انہوںنے کہاکہ غریب علاقوں میں الخدمت فاﺅنڈیشن صابن ، ماسک اور سینی ٹائزر ارزاں قیمت پر عوام کو مہیا کرے گی۔انہوںنے کہاکہ 170 روپے والا سینی ٹائزر 750 روپے میں فروخت ہورہاہے ، حکومت کو اس کا فوری نوٹس لینا چاہیے ۔انہوںنے کہاکہتفتان بارڈر اور دیگر علاقوں میں بنائے گئے قرنطینہ سنٹرز سبزی منڈی کا منظر پیش کر رہے ہیں جہاں مریضوں اورتندرست لوگوں کو اکٹھا رکھا گیاہے، یہ انتہائی نااہلی اور ظلم ہے ۔ان سنٹروں کی حالت زار کو ٹھیک کیا جائے ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ مساجد کو بند کرنے کی بجائے ان کی صفائی ستھرائی کی طرف توجہ دی جائے ۔ ان مساجد کو آباد اور اللہ سے توبہ و استغفار کرنے کی ضرورت ہے ۔ اللہ کے آگے گڑ گڑائیں گے تو مصیبتوں اور پریشانیوں سے نجات ملے گی ۔
 

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس