Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

وزیراعظم عمران خان کو پہلے مہنگائی ، بے روزگاری کا اندازہ نہیں تھا ،اب خواب غفلت سے باہر آئے ہیں تو جذباتی اور نمائشی اقدامات کا اعلان کردیاہے ،لیاقت بلوچ



لاہور 11فروری 2020ئ
نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان اور سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ وزیراعظم عمران خان کو پہلے مہنگائی ، بے روزگاری کا اندازہ یا احساس نہیں تھا ،اب خواب غفلت سے باہر آئے ہیں تو جذباتی اور نمائشی اقدامات کا اعلان کردیاہے ۔ 18ارب روپے 22 کروڑ عوام کی ضر وریات زندگی پوری نہیں کر سکتے ۔ افراط زر اور یوٹیلیٹی بلز کے ہوشربا اضافہ کی وجہ سے عوام کی قوت خرید ختم ہو جائے گی ۔ سستے تنور ، خود کار مشینوں پر روٹی ، بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام ، کٹے بچھڑے ، مرغی انڈے سب نمائشی پروگرام ناکام ہو گئے ۔ پاکستان کی سب سے بڑی ضرورت یہ ہے کہ سول ملٹری اسٹیبلشمنٹ ریاستی نظام پر بالادستی کا مائنڈ سیٹ بدلے ، ملک میں آزادانہ اور منصفانہ انتخابات کے انعقاد کے لیے جمہوری قوتیں اتفاق رائے سے جدوجہد کریں ۔ ان خیالات کا اظہار انہوںنے منصورہ میں دیر لوئر ، بونیر اور بلوچستان کے وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔
لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ اسلام کو دستور پاکستان کی بنیاد تسلیم کرایا جاچکاہے جس سے ہٹنا کسی حکومت کے لیے ممکن نہیں ۔ ریاستی نظام کی اصلاح آئین کے رہنما اصولوں کے مطابق کی جائے تو پاکستان آزاد و خود مختار اور باوقار حیثیت بحال کر سکتاہے ۔ انہوںنے کہاکہ سیاست دان سیاسی پارلیمانی اور جمہوری نظام کے استحکام اور حصول اقتدار کے لیے عالمی اور ملکی اسٹیبلشمنٹ کے سامنے بھکاری نہ بنیں ۔ انہوںنے کہاکہ حکومت قومی معیشت کو بحال کرنے کے لیے خود انحصاری ، زراعت ، تجارت ، صنعت سے متعلق لوگوں کے اعتماد کی بحالی اور سود کا خاتمہ کرے ، اسلامی معاشی نظام ہی مسائل کا حل ہے منی بجٹ تو عوام کو زندہ در گور کر دے گا ۔
 

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس