Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں سیکورٹی فورسز کی تعداد میں اضافہ تشویشناک ہے ۔محمد جاوید قصوری


لاہور 30 جولائی 2019ء: امیر جماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب محمد جاوید قصوری نے کہا ہے کہ بھارت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں 10ہزار اضافی فوجیوں کی تعیناتی اس بات کا ثبوت ہے کہ ہندوستان نہتے کشمیریوں کی آواز دبانے میں بری طرح ناکام ہوچکا ہے۔ پہلے ہی ہندوستان کی سات لاکھ فوج وادی میں مظالم کے پہاڑ ڈھارہی ہے۔ بھارت نے ظلم و بربریت کی انتہا کردی ہے۔ وہ مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنے کی مذموم سازشیں کررہا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز مختلف عوامی وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق حل کیا جائے۔ پچاس برسوں سے بھارت ان پر عمل درآمد کرنے سے گریزاں ہے۔ انسانی حقوق کے حوالے سے عالمی قوانین کی کھلم کھلا خلا ف ورزی ہے۔ اب وقت آگیا ہے کہ حکومت پاکستان اس اہم مسئلہ پر دوست ممالک اور عالمی برادری کو اعتماد میں لے اور بھارتی پر تشدد کارروائیوں اور اس کے گھناﺅنے چہرے کو ساری دنیا کے سامنے بے نقاب کیا جائے۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان کے عوام اپنے کشمیری بھائیوں کے ساتھ کھڑے ہیں۔ ہم ان کی اخلاقی سفارتی اور سیاسی حمایت جاری رکھیں گے۔ کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ نہیں بلکہ پاکستان کی شہ رگ ہے۔ اس سے دستبردار ہونے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ امریکہ اگر اس معاملے میں ثالثی کا خواہش مند ہے تو اس کے لیے ضروری ہے کہ وہ بھارت پر سفارتی دباﺅ بڑھائے ۔ ہندوستان نے ہمیشہ پائیدار اور نتیجہ خیز مذاکرات سے راہ فرار اختیار کی ہے۔ محمد جاوید قصوری نے مزید کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ بھارت کو اس کی زبان میں جواب دیا جائے۔ ہندوستان نے مقبوضہ وادی میں ظلم کی داستانیں رقم کی ہیں۔ کشمیریوں کی تیسری نسل انڈین آرمی کے خلاف مزاحمت کررہی ہے۔ 

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس