Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

بھات میں سب سے بڑی مسلم اقلیت سمیت عیسائیوں ،سکھوں کے ساتھ جانوروں سے بدتر سلوک روا رکھا جارہا ہے ۔سینیٹرسراج الحق


لاہور 29جولائی 2019ء:امیر جماعت اسلامی پاکستان سینٹر سراج الحق نے اقلیتوں کے عالمی دن کے موقع پر منصورہ سے جاری اپنے بیان میں غیر مسلم پاکستانی برادری کو جان و مال اور عزت و آبرو کے تحفظ کی ضمانت دیتے ہوئے کہاکہ اسلام اور ہمارا آئین پاکستانی برادری کے حقوق کی حفاظت کو یقینی بنا تا ہے ،پاکستان میں عیسائی ،سکھ ،ہندو ،پارسی اور بہت سے دیگر مذاہب کے لوگ بڑی تعداد میں موجود ہیں ،جنہیں اپنے مذہب پر عمل کرنے کی مکمل آزادی ہے ،پاکستان میں اقلیتوں کی عبادت گاہوں کو احترام کی نظر سے دیکھا جاتا ہے اور ان کی حفاظت کو اپنا آئینی فریضہ سمجھا جاتا ہے ۔انہوں کے کہا کہ پاکستان میں رہنے والے غیر مسلم برادری کو اقلیت کی بجائے پاکستانی برادری قرار دینے کی قرارداد سب  سے پہلے میں نے ہی خیبر پختونخواہ اسمبلی میں پیش کی تھی،ہم پاکستانی برادری کے خوشی اورغم میں شریک ہوتے ہیں ۔پاکستان میں آج تک کسی کو جبری مذہب تبدیل کرنے پر مجبور نہیں کیا گیا ، پاکستانی برادری فوج سمیت ملکی اداروں میں اپنی ذمہ داریاں ادا کررہی ہے اور اسے کہیں بھی تعصب کا سامنا نہیں جو پوری دنیا کے لیے ایک روشن مثال ہے ۔ پاکستانی برادری سیاست میں بھی موثر کردار ادا کررہی ہے ۔دنیا بھر کے ممالک کی نسبت غیر مسلم پاکستان میں زیادہ محفوظ ہیں۔پاکستان کی ترقی میں ان کا بھی بڑا ہاتھ ہے ۔ہمارے دین میں غیر مسلموں کی جان و مال کے تحفظ کی ضمانت دی گئی ہے ۔ 

سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ عالمی سطح پر اقلیتوں کی حفاظت کے قوانین پر عملد ر آمد نہیں ہورہا۔بھارت میں اقلیتوں پر ظلم و جبر ، اجتماعی قتل عام اور آبادیوں کو جلانے کے واقعات آئے روزکا معمول ہے ۔ سب سے بڑی مسلم اقلیت سمیت عیسائیوں ،سکھوں حتی کہ چھوٹی ذات کے ہندو دلتوں کے ساتھ بھارت میں جانوروں سے بدتر سلوک روا رکھا جارہا ہے ،مسلمانوں اور عیسائیوں کی عبادت گاہیں محفوظ نہیں ،مسجد وں اور گرجاگھروں کو نذر آتش کرنے کے واقعات میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے ۔اقلیتوں کے زبر دستی ہندوں بنانے اور ہندو بھجن آرتی گیارتی منترا گانے پر مجبور کیا جاتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ بابری مسجد کی شہادت ، گولڈن ٹیمپل کو نذر آتش کرنے گجرات میں مسلمانوں کے قتل عام تک بھارت کے نام نہاد سیکولر چہرے سے نقاب الٹنے کے کتنے واقعات ہیں جو روزانہ کا معمول ہیں۔کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین پامالی پر بھی عالمی برادری خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ عالمی برادری نے کشمیریوں کو حق خودارادیت دینے کا وعدہ کررکھا ہے مگر ستر سال گزرنے کے باوجود یہ وعدہ پورا نہیں کیا گیا۔فلسطین پر ناجائزقابض اسرائیلی فوج روزانہ فلسطینیوں کو قتل کررہی ہے ۔برماکے مسلمانوں پر ظلم کے پہاڑ توڑے جارہے ہیں ،ہزاروں مسلمانوں کو ان کی آبادیوں میں آگ لگا کر زندہ جلا دیا گیا ہے اورلاکھوں کو زبردستی برماسے نکال دیا گیا ہے ،لیکن عالمی برادری نے اس پرچپ سادھ رکھی ہے ۔

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس