Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اسلام کے عادلانہ نظام سے ہی ملک میں قیام امن اور مہنگائی سے نجات ممکن ہے۔محمد حسین محنتی


 کراچی/کوٹری 20 اپریل2019 جماعت اسلامی سندھ کے امیرمحمد حسین محنتی نے کہا ہے کہ بلوچستان سمیت ملک بھر میں دہشتگردی کے مسلسل واقعات نے حکومت کے امن امان کے دعووں کو کھوکھلا ثابت کردیا ہے، ابتر معاشی صورتحال، مہنگائی سے لیکر امن امان تک حکومتی کارکردگی نے قوم کو مایوس کیا ہے، آئی ایم ایف کے غلام حکمرانوں سے معاشی صورتحال کی بہتری کی امید فضول ہے، اسلام کے عادلانہ نظام سے ہی ملک میں قیام امن اور مہنگائی سے نجات ممکن ہے، ستر سالوں سے عوام نے مسلسل جن کو ووٹ دیکر ایوان اقتدار میں بھیجا انہوں نے ملک وقوم کی بجائے صرف اپنے مفادات کا تحفظ اور غیروں کے ایجنڈے کو پورا کیا جس کی وجہ سے آج ملک وقوم بے شمار مسائل کا شکار ہوچکے ہیں، مسائل حل ہونے کی بجائے اضافہ ہوتا جارہا ہے اسلئے مخلص ودیانتدار قیادت ہی ملک وقوم کے مسائل کو حل کرسکتی ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے نوری آباد، تھانہ بولا خان، خدا کی بستی اور کوٹری میں دعوت الی اللہ رابطہ عوام مہم کے سلسلے میں منعقدہ عوامی ودعوتی تنظیمی اجتماعات سے خطاب، سیاسی وسماجی رہنماﺅں،اقلیتی نمائندوں سے ملاقات اور میڈیا سے بات چیت کے دوران کیا۔ اس موقع پر صوبائی سیکریٹری اطلاعات مجاہد چنا،ضلعی امیر حافظ صالح پنہور اور مقامی ذمہ داران بھی انکے ہمراہ موجود تھے۔صوبائی امیر محمد حسین محنتی نے مقامی کارکنان کے ساتھ ملک کر مختلف بازاروں کا گشت کرکے شاپ ٹو شاپ جماعت کی دعوت وپیغام سے آگاہ کیا،علاوہ ازیں انہوں نے تھانہ بولا خان میں اقلیتی رہنماءراجہ آسر مل منگلانی کے استقبالیہ میں شرکت کی جنہوں نے معزز مہمانوں کو سندھ کا روایتی تحفہ اجرک بھی پیش کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ عالمی مالیاتی اداروں کی ڈکٹیشن پر ٹیکس کی بمباری کرکے عوام کا جینا دوبھر کردیا گیا ہے، صرف ٹیم پر تنقید مناسب نہ ہوگا، کامیاب کپتان کی خوبی یہ ہونی چاہئے کہ اچھی کارکردگی کیلئے قابل وبے داغ ٹیم کا انتخاب کرے،پی ٹی آئی کی آدھی کابینہ مشرف دور کی ہے اور کئی وزراءنیب کے مقدمات کا سامنا کررہے ہیں، ملکی دولت کی لوٹ مار کرنے والوں کا بلاتفریق احتساب پوری قوم کی خواہش ہے مگر اس احتسابی عمل کو انتقام کی نظر نہ کیا جائے، ایک سوال کے جواب میں جماعت اسلامی سندھ کے امیر کا کہنا تھا کہ صفائی ستھرائی ،پانی اور سیوریج سسٹم کو ٹھیک کرنے سمیت عوام کے بنیادی مسائل کے حل کیلئے بلدیاتی اداروں کی اصلاح اور نمائندوں کو مالی وانتظامی طور پر بااختیار بنایا جائے۔

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس