Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

دودھ کے نام پر بیماریاں بیچنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے ۔ذکراللہ مجاہد


 لاہور11جنوری 2017ء:امیر جماعت اسلامی لاہور ذکر اللہ مجاہد نے کہا ہے کہ دودھ کے نام پر بیماریاں بیچنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے ۔ان خیالات کا اظہار گذشتہ روز انہوںنے دفتر جماعت اسلامی لاہور میں مختلف مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والے و فود سے گفتگو کے دوران کیا ۔انہوں نے کہاکہ ایک کروڑ سے زیادہ آبادی والے شہر میں 80ہزار لیٹر دودھ دیہاتوں اور دیگر جگہوں سے آتا ہے جبکہ 4لاکھ لیٹر سے زائد دودھ روزانہ شہر میں دوکانوں ، ہوٹلوں اور کھانے پینے کی اشیاء میں استعمال اور فروخت ہو رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ شہر میںزیادہ تر دودھ کھانے پینے کی چیزوں میں بھینسوں کا نہیں بلکہ یوریا کھاد سمیت دیگر مضر صحت کیمیکلز سے تیار شدہ ہوتا ہے جو صحت کے لیے انتہائی خطرناک ہے جس سے کینسر ، ذہنی و جسمانی معذوری ، آنکھوں کے امراض سمیت دیگر خطرناک بیماریوں کا باعث بن رہا ہے ۔انہوںنے کہا کہ شہربھر میں کھانے پینے کی چیزیںانتہائی گھٹیا اور غیر معیاری فروخت ہورہی ہیں اور محکمہ خوراک اور ضلعی انتظامیہ اس گھمبیر مسئلے سے آنکھیں بند کئے ہوئے ہیں جو قابل مذمت ہے ۔ذکر اللہ مجاہد نے حکومت پنجاب سے مطالبہ کیا کہ محکمہ خوراک اور متعلقہ اداروں کی کارکردگی کو بہتر بنانے کیلئے اقدامات اُٹھائے اور جرمانوں اور سزائوں سے بے خوف لوگ جو دھڑادھڑاملاوٹ کر کے دودھ بنا اور بیچے رہے ہیں ان کی اور سرپرستی کرنے والوں کے خلاف فی الفور کاروائی کی جائے تاکہ قیمتی انسانی جانوں کو خطرناک بیماریوں سے بچایا جا سکتا ہے۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں







سوشل میڈیا لنکس