Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

جسٹس آصف سعید کھوسہ کے ریمارکس پوری قوم کی آنکھیں کھولنے کے لیے کافی ہیں ۔حافظ محمدادریس


 لاہور09جنوری 2017ء:نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان حافظ محمد ادریس نے منصورہ میں ہفتہ وار درس قرآن کی نشست سے خطاب کرتے ہوئے کہاہے کہ سرپم کورٹ میں زیر سماعت کرپشن کیس کی سماعت کے دوران بنچ کے سربراہ جسٹس آصف سعید کھوسہ نے بھری عدالت میں فرمایا ہے کہ دستور کی دفعہ 62-63 لاگو ہو جائے تو امیر جماعت اسلامی سراج الحق کے سوا تمام مدعی اور مدعیٰ علیہان پارلیمان سے باہر ہو جائیں گے ، کیس کا فیصلہ جو بھی آیا یہ ریمارکس پوری قوم کی آنکھیں کھولنے کے لیے کافی ہیں ۔ جماعت اسلامی اس بات پر اللہ کا شکر ادا کرتی ہے کہ اس کے پاس اقتدار اور دولت نہیں مگر کردار اور اخلاق کی دولت ہے ہمیں اس پر فخر ہے ۔ ہم اس قوم کی قسمت بدلنے کا عزم کر کے میدان میں نکلے ہیں ۔
حافظ محمد ادریس نے کہاکہ اللہ نے اپنے بندوں کی شان اور کردار کو قرآن میں بیان فرمایا ہے ۔ اللہ کے بندے مغرور و متکبر نہیں ہوتے ، لٹیرے اور ظالم نہیں ہوتے ۔ وہ نیکی کے مبلغ ہی نہیں نیکی پر کاربند بھی ہو تے ہیں اور نیکی کے فروغ اور برائی کے خاتمہ کے لیے جدوجہد بھی کرتے ہیں ۔ ایسے لوگوں کو اگر زمین میں اقتدار ملتاہے تو وہ پورے معاشرے کو ہر لحاظ سے پاکیزہ اور شفاف بنادیتے ہیں ۔ ہر غلاظت اور گندگی ، خواہ وہ کوڑے کرکٹ کی ہو یا بدعنوانی و بدکردار کی ، اسے ختم کر کے معاشرے کو امن و سکون فراہم کرنا مسلم حکمرانوں کی ذمہ داری ہوتی ہے ۔ قرآن و سنت کی پیروی اختیار کرنے والا خوش نصیب ہوتاہے ۔ وہ دولتِ دنیا کے پیچھے نہیں بھاگتا ، اللہ کی رضا اور خلق خدا کی خدمت اس کا مشن ہوتاہے ۔ اللہ اسے دنیا میں بھی رسوائی سے بچاتاہے اور آخرت میں بھی اس پر رحمت کا سایہ ہوگا ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں







سوشل میڈیا لنکس