Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

قراردادبرائے مزدورمسائل


 اجلاس مرکزی مجلس شوریٰ منعقدہ24- 23ستمبر2016،منصورہ لاہور


 
جماعت اسلامی پاکستان کی مرکزی مجلس شوریٰ کے اجلاس میں محنت کشوں کے مسائل پر درج ذیل قرار داد پیش کی گئی ۔
ریلوے انتظامیہ کی جانب سے اس MLODکے نفاذ کے لیے پرانا سرکلر دوبارہ جاری کیاگیا ہے۔ جس کی قانونی حیثیت عملی طور پر ختم ہوچکی تھی اور انڈسٹریل ریلیشن ایکٹ 2012ء میں بھی اسے تحفظ نہیں دیا گیا تھا۔مرکزی مجلس شوریٰ مذکورہ سرکلر کادوبارہ جاری کرنا حکومتی بدنیتی قرار دیتی ہے۔ جس کامقصد ریلوے میں آزاد ٹریڈ یونین کو ختم کرناہے۔ جماعت اسلامی پاکستان کی مرکزی مجلس شوریٰ کا یہ اجلاس ریلوے حکام کے اس اقدام کی شدید مذمت کرتاہے اور مطالبہ کرتاہے کہ اس سرکلر کو فوری طور واپس لیاجائے۔
٭۔ مرکزی مجلس شوریٰ کااجلاس پاکستان اسٹیل مل کی مسلسل بندش اور پیداواری عمل کو دانستہ طو رپر روکنے کے عمل کو اس بڑے صنعتی ادارے کو تباہ کرنے کی سازش قرار دیتاہے۔ مجلس شوریٰ کامطالبہ ہے کہ اسٹیل مل کو تباہی سے بچایا جائے اور ملازمین کی تنخواہیں جلد ادا کی جائیں اور ملازمین کو ملازمتوں سے فارغ کرنامکمل طور پر بند کیاجائے۔
٭۔ مرکزی شوریٰ کااجلاس صنعتی اداروں میں ٹھیکیداری نظام کے بڑھتے ہوئے رجحان اور اس کے نفاذ کو مزدوردشمن اقدام قرار دیتاہے۔
٭۔ ورکرز ویلفیئر فنڈمیں اربوں روپے میں موجود ہونے کے باوجود گزشتہ پانچ سالوں سے چار صوبوں کے محنت کشوں کو جہیز کی گرانٹ، مزدوروں کی وفات پر ملنے والی گرانٹ کو بند کرنا، بچوں کے سکالر شپ اور دیگر مراعات نہ دیناقابل مذمت اور ظالمانہ اقدام ہے۔ مجلس شوریٰ کا مطالبہ ہے کہ حکومت فوری طور پر ورکرز ویلفیئر فنڈ سے پاکستان کے محنت کشوں کی مراعات بحال کرے۔
٭۔ بلدیہ ٹائون علی انٹر پرائزز جس میں 259محنت کش زندہ جلا دیئے گئے تھے، اس سانحہ کے ملزمان کی نشان دہی کے باوجود حکومت کی سردمہری اور ملزمان کے خلاف مؤثر قانونی کاروائی نہ کرنا قابل مذمت اقدام ہے۔ ان مجرموں کو فوراً کیفر کردار تک پہنچایاجائے اور متاثرہ خاندانوں کو مکمل ریلیف دیاجائے۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس