Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

تاج حیدر کے گھر پر ایک ہی مہینے میں تیسری ڈکیتی کی واردات شہر میں امن و امان کی دعویدار حکومت کےلئے لمحہ فکریہ ہے


کراچی 12/ ستمبر2019 جماعت اسلامی سندھ کے امیر و سابق ایم این اے محمد حسین محنتی نے پیپلز پارٹی کے رہنماءو سابق سینیٹر تاج حیدر کے گذری میں واقع گھر ڈکیتی کی واردات پراظہار تشویش اور واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ تاج حیدر کے گھر پر ایک ہی مہینے میں تیسری ڈکیتی کی واردات شہر میں امن و امان کی دعویدار حکومت اور سیکیورٹی اداروں کےلئے لمحہ فکریہ ہے۔ صوبائی امیر محمد حسین محنتی نے پیپلز پارٹی رہنماءتاج حیدر کو ٹیلی فون کر کے ڈکیتی کی واردات پر اظہار افسوس اور واقعہ کی تفصیلات معلوم اور ان کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے حکومت سے مطالبہ کیا کہ تاج حیدر کے گھر پر ایک ماہ کے دوران تیسری ڈکیتی کی واردات کا نوٹس لیکر ملوث ملزمان کے خلاف کاروائی اور شہریوں کی جان و مال کے تحفظ کے اقدامات کئے جائیں ۔ انہوں نے کہا کہ کراچی آپریشن کے بعد ٹارگٹ کلنگ کا خاتمہ اور امن و امان کی صورتحال قدر بہتر ہوتی جارہی تھی مگر اسٹریٹ کرائم میں اضافہ اور ڈکیتی، رہزنی و قتل و غارت گری کے واقعات میں حالیہ اضافہ کراچی آپریشن کو سبو تاژ کر کے شہر میں ایک بار پھر بد امنی پھیلانے کی سازش ہے۔ یاد رہے کہ صرف اگست کے مہینے میں 36 افراد قتل، 169 گاڑیاں، 2704 موٹر سائیکلیں اور 4500 موبائل چھینے جانے کی رپورٹ درج ہوئی ہیں۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس