Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

امت مسلمہ کے جسم پر یہود و ہنود نے پنجے گاڑ رکھے ہیں، کشمیر میں ایک کربلا برپا ہے۔فوزیہ محبوب


فیصل آباد9/ ستمبر2019ء:جماعت اسلامی حلقہ خواتین کی قائمقام ضلعی ناظمہ فوزیہ محبوب نے کہا ہے کہ کشمیر میں ایک کربلا برپا ہے، امت مسلمہ کے جسم پر یہود و ہنود نے پنجے گاڑ رکھے ہیں، لیکن ہمارے حکمران مصلحت پسندی اور بزدلی کا شکار ہیں، بیٹیاں پکار رہی ہیں اور حکمران مذمت کے بیانات جاری کر رہے ہیں۔میدانِ کربلا میں نواسہ رسول ﷺ حضرت امام حسینؑ اور ان کے اصحابِ باوفا نے وہ تاریخی کردار ادا کیا، جس سے پوری انسانیت تا قیامت درسِ حریت حاصل کرتی رہے گی، کربلا انقلاب کی علامت ہے اور کربلا سے درسِ انقلاب لیکر اٹھنے والی کوئی بھی تحریک ناکام نہیں ہو سکتی ہم کربلا سے سبق سیکھ سکتے ہیں کہ کیسے تہذیب اسلامی کو فرعونی تہذیب بننے سے بچایا جائے، آج تہذیب اسلامی کو سب سے بڑا خطرہ مقبوضہ کشمیر اور فلسطین میں ہے۔ آج عالم اسلام یزیدان عصر کے قبضے میں ہے اور کشمیر و فلسطین ان یزیدان عصر سے لڑ رہا ہے، ہمیں اپنے کردار کا تعین کرنا ہے۔ ہمیں تہذیب اسلامی پر پڑنے والی مشکل گھڑی کو شہیدان کربلا کے اقدامات کی روشنی میں نبرد آزما ہونا ہے۔ ہم نے مودی اور یہودی سے عالم اسلام کو آزاد کروانا ہے۔انہوں نے کہاکہ اگر آج پاکستان کے ہوتے ہوئے کشمیر پر مودی مسلط ہے تو یہ پاکستان کی کمزوری ہے، آج بہتر سال گزر گئے ہیں، کوئی کشمیریوں کے لیے آواز بلند کرنے والا نہیں ہے۔ کربلا کی خواتین بھی ہمارے لیے رول ماڈل ہیں، جنہوں نے شہادتوں کے بعد بھی اسلام کی ترویج اور تبلیغ کے لیے کوئی موقع ضائع نہ کیا اور نہ ہی کمزوری دکھائی۔ آج فلسطینی اور کشمیری حسینی کردار ادا کر رہے ہیں، ہم سب اپنے فلسطینی اور کشمیری بہن بھائیوںکے ساتھ ہیں۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس