Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

جنگ سے بچنے کے لیے جنگ کی تیاری ضروری ہے، بھارت کو اس کی زبان میں جواب دینا ہو گا ۔جاوید قصوری


لاہور 18/اگست 2019ء:امیر جماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب اور صدر ملی یکجہتی کونسل وسطی پنجاب محمد جاوید قصوری نے کہا ہے کہ اقوام متحدہ کی جانب سے مسئلہ کشمیر کو بین الاقوامی امن اور سیکورٹی کا مسئلہ تسلیم کرناخوش آئند ہے، اسے یواین چارٹر اور سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق حل ہونا چاہے مگر بھارت مسلسل اس سے راہ فرار اختیار کر رہا ہے۔ مسئلہ کشمیر دو ایٹمی قوتوں کے درمیان ایٹمی فلیش پوائنٹ ہے۔ اقوام عالم کے امن کے لیے ضروری ہے کہ مسئلہ کشمیر کو فی الفور حل کیا جائے۔ یہ ڈیڑھ کروڑ انسانوں کی زندگی اور موت کا مسئلہ اور ان کے مستقبل کا سوال ہے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے گذشتہ روز رائے ونڈ میں جماعت اسلامی کے زیر اہتمام اجتماعی ناشتہ کے پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ بھارت کا مقبوضہ کشمیر سے اب تک کرفیو نہ اٹھانا انتہائی ظالمانہ اور انسانیت سے عاری عمل ہے۔ اگر بھارت نے کشمیر کے اندر لگائی آگ کو نہ بجھایا توا نڈیا خود اس میں جل جائے گا۔ ہندوستان نے اپنی تباہی کو خود چنا ہے۔ کشمیر پاکستان کی شہ رگ ہے،اس سے دستبردار ہونے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔ انھوں نے کہا کہ بھارت کی جانب سے پلوامہ طرز پر جارحیت کا اندیشہ ہے۔ بروقت جواب دینے کے لیے سیاسی و عسکری قیادت پوری طرح تیار رہے۔ انڈیا نے 70برسوں سے مقبوضہ کشمیر میں مظالم کی انتہا کردی ہے۔ اب وقت آگیا ہے کہ اس اہم مسئلے کو حل کرنے کے لیے عالمی برادری آگے بڑھے ا ور بھارت پر سفارتی دباﺅر بڑھائے ۔ محمد جاوید قصوری نے مزید کہا کہ بھارتی وزیر دفاع کا بیان تشویشناک ہے، دنیا کو اس کا نوٹس لیانا چاہیے۔ پاکستان 22کروڑ بہادر اور غیور عوام کا ملک ہے۔ آر ایس ایس کی سوچ رکھنے والوں کو بھر پور قوت سے جواب دیا جائے گا۔ آج ثابت ہوگیا ہے کہ بھارت کے حوالے سے جماعت اسلامی کا بیانیہ درست تھا۔ ہندوستان کبھی ہمارا دوست نہیں تھا اور نہ ہی کشمیر کی آزادی اور بلوچستان میں مداخلت کے خاتمے تک بن سکتا ہے۔ 

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس