Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

کشمیر میں قیامت برپا ہے اور ہماری حکومت اور اپوزیشن باہم دست و گریبان ہیں۔حافظ محمد ادریس


لاہور9اگست  2019ء:جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی رہنما اور سابق ڈائریکٹر ادارہ معارف اسلامی حافظ محمد ادریس نے جامع مسجد منصورہ میں جمعہ کے بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ کشمیر میں قیامت برپا ہے اور ہماری حکومت اور اپوزیشن باہم دست و گریبان ہیں۔کشمیر کی صورتحال پر فوج اور پارلیمان کے موقف کو قوم نے سراہا ہے ،لیکن موقع کی نزاکت کے حوالے سے حکومت اور اپوزیشن میں جو اتحاد نظر آناچاہئے تھاوہ مفقود تھا ۔وزیر اعظم کی تقریر میں بھی وہ کڑک اور جرأت نہیں تھی جووقت کا تقاضاتھا۔وزیر اعظم کو اپنے خطاب میں اپوزیشن کو رگیدنے کی بجائے نرم لہجے میں بات کرتے ہوئے سب کو ساتھ لیکر چلنے اور اتحاد و اتفاق کی بات کرنی چاہئے تھی ۔انڈیا کو پاکستانی حکومت کی طرف سے بہت سخت پیغام جانا چاہئے تھا۔
حافظ محمد ادریس نے کہا کہ کشمیر کے مسئلہ پر پوری قوم متحد ہے ۔بھارت نے جو قدم اٹھایا ہے پوری دنیا نے اس کی مذمت کی ہے لیکن اگر مدعی سست ہوتو گواہ کی چستی کسی کام نہیں آتی ۔ حکمرانوں کو دنیا کے سامنے کشمیر میں ہونے والے مظالم اور بھارتی قابض فوج کے ہاتھوں انسانی حقوق کی بدترین خلاف ورزیوں کواجاگر کرنا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ پون صدی سے بھارت ہر طرح کے ظالمانہ اور وحشیانہ ہتھکنڈوں کے باوجود کشمیر میں تحریک آزادی کو ایک دن کیلئے دبانے میں کامیاب نہیں ہوسکا۔بھارت ایک لاکھ سے زائد کشمیریوں کو شہید ،ہزاروںکو زخمی اور لاکھوں کو بلاجواز گرفتار کرکے ٹارچرسیلوں میں انسانیت سوز مظالم اور اذیت کا نشانہ بنانے کے باوجود کشمیریوں کو جھکانے اور دبانے میں ناکام رہا ہے ۔انہوں  نے کہا کہ کشمیر ی بھارت کی غلامی قبول نہیں کریں گے ۔پاکستانی قوم اپنے کشمیری بھائیوںکے ساتھ ہے ۔انہوں نے حجاج کرام اور قوم سے اپیل کی کہ وہ حج اور عید کے موقع پر مظلوم کشمیری بھائیوں کواپنی دعائوں میں یاد رکھیں ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس