Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

وزیراعظم پارلیمنٹ کو اعتمادمیں لیکرقوم کو سچ بتائیں اور اپنی غلطی و نااہلی کا اعتراف کریں۔محمد حسین محنتی


کراچی  10جولائی 2019 جماعت اسلامی سندھ کے امیرو سابق ایم این اے محمد حسین محنتی نے کہا ہے کہ آئی ایم ایف کی جانب سے 733ارب کے نئے ٹیکس لگنے اور ہر تین ماہ بعد بجلی مہنگی کرنے کا انکشاف چیئرمین ایف بی آر کے منہ پر طمانچہ ہے، تبدیلی کے دعویدار حکمرانوں نے عملی طور پر قوم وملک کو آئی ایم ایف سمیت مالیاتی اداروں کے پاس گروی رکھ دیا ہے،اسلام میں خودکشی حرام ہے مگر وزیراعظم پارلیمنٹ کو اعتمادمیں لیکرقوم کو سچ بتائیں اور اپنی غلطی و نااہلی کا اعتراف کریں۔ انہوں نے آج ایک بیان میں مزید کہا کہ پارلیمنٹ کوبائے پاس اور جھوٹ بول کر 516ارب کے نئے ٹیکس لگانے کا بتایا گیا مگر آئی ایم ایف کی حالیہ رپورٹ نے ایف بی آر کے چیئرمین شبر زیدی سمیت حکمرانوں کے تمام تر دعووں کی قلعی کھول کر رکھ دی ہے۔بڑے دعووں کے پیش نظرعوام کی موجودہ حکومت سے بڑی امیدیں وابستہ تھیں مگرتبدیلی، مہنگائی،کفایت شعاری،غریبوں کو ریلیف دینے سے لیکر ڈالر کی اڑان تک حکومت نے قوم کو مایوس اورابتک پی ٹی آئی حکومت کا ہر دعویٰ جھوٹ کا پلندہ ثابت ہوا ہے، ایف بی آر چیئرمین نے گذشہ روز فیصل آباد میں میڈیا سے بات چیت کے دوران نئے ٹیکس لگانے کی تردید کی تھی مگر اگلے ہی روز آئی ایم ایف کے اعلامیہ نے ان کا جھوٹ بے نقاب کردیا۔ صوبائی امیر نے کہا کہ کمر توڑ مہنگائی سے نجات،ملکی آزادی وخودمختاری سمیت تمام مسائل کا واحد حل قرآن وسنت کے نفاذ میں ہے۔

 

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس