Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

سندھ میں پانچویں اور آٹھویں جماعت کے ایک لاکھ طلبہ کا فیل ہونا لمحہ فکریہ ہے۔کاشف سعیدشیخ


کراچی  06 جولائی 2019 جماعت اسلامی سندھ کے جنرل سیکریٹری کاشف سعید شیخ نے سندھ بھر کے سرکاری اسکولوں میں پانچویں اور آٹھویں جماعت میں پڑھنے والے ایک لاکھ طلبہ کے فیل ہونے والے انکشافاتی خبر پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یہ نتیجہ محکمہ تعلیم پر سوالیہ نشان جبکہ تعلیمی ایمرجنسی کے باوجود تعلیم کی اس طرح کی صورتحال سندھ کے حکمرانوں کےلئے لمحہ فکریہ ہے۔ انہوں نے آج ایک بیان میں کہا کہ قومیں ہمیشہ بہتر تعلیم سے ہی ترقی کرتی ہیں مگر سندھ میں ہر شعبہ کے طرح تعلیمی صورتحال بھی انتہائی مخدوش بلکہ سب سے زیادہ کرپشن نا اہلی و اقربا پروری اسی میں ہے۔ گھوسٹ اسکول گھوسٹ اساتذہ اسی محکمہ کی پہچان ہے۔ حکومت تعلیم کی بہتری کی بجائے صوبائی وزیر کبھی اساتذہ کو انگوٹھا چھاپ یا کبھی وہ کہتے ہیں کہ اساتذہ کو سائنس اور ریاضی پڑھانے نہیں آتی۔ اسوقت بھی سندھ میں لاکھوں بچے تعلیم کے زیور سے محروم ہیں، اسکولوں مین بنیادی سہولیات کا فقدان جبکہ بلڈنگ وڈیروں کی اوطاق و گودام بنے ہوئے ہیں۔جماعت اسلامی کے رہنماءنے زور دیا کہ حکومت سندھ میں تعلیم کی بہتری کےلئے میرٹ کو یقینی قابل اساتذہ کو تعینات اور کرپشن فری اقدامات کو یقینی بنایا جائے طلباءفیل ہونے والے حالیہ واقعے کا نوٹس لیا جائے۔

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس