Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

پانی کی چوری اورغیر منصفانہ تقسیم نے عوام کو پانی کی بوند بوند سے ترسا دیا ہے۔ حافظ نعیم الرحمن


کراچی /24جون 2019ء:امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن نے کہا ہے کہ کراچی کا پانی کراچی کے شہریوں کو نہیں دیا جا رہا۔پانی کی چوری اور غیر منصفانہ تقسیم پانی چوری کے عمل نے عوام کو پانی کی بوند بوندکے لیے  ترسا دیا ہے۔ اس مذموم عمل میں صوبائی حکومت اور واٹر بورڈ کے افسران و اہلکار اور ٹینکرمافیا ملوث ہے۔ صوبائی حکومت اور واٹر بورڈ کراچی کے عوام کو پانی فراہم کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہو چکے ہیں۔ کراچی کے عوام سے ووٹ لے کر اقتدار اور وزارتوں کے مزے لینے والے بھی مجرمانہ طور پرخاموش اور تماشائی بنے ہوئے ہیں۔ عوام کا کوئی پُرسان حال نہیں۔ کراچی کے عوام پانی، بجلی اور ٹرانسپورٹ سمیت دیگر بے شمار مسائل کا شکار ہیں اور ملک کو سب سے زیادہ ریو نیو دینے والے اور صوبے کے دارالخلافہ کو صوبائی اور وفاقی حکومتیں نے لاوارث سمجھ رکھا ہے۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ حکومتیں خواہ کوئی بھی رویہ اختیار کریں جماعت اسلامی کراچی کے عوام کے ساتھ ہے۔ ہم کراچی کے عوام کو تنہا نہیں چھوڑیں گے۔ جماعت اسلامی نے ”کراچی کو عزت دو، حق دو“ کی تحریک کا آغاز کر دیا ہے۔ کراچی کو اس کے حقوق و اختیارات کی فراہمی، بے شمار شہری مسائل کے حل اور بڑھتی ہوئی مہنگائی اور آئی ایم ایف کی غلامی کے خلاف اتوار30جون کو سہراب گوٹھ تا مزار قائد ایک زبردست ”کراچی عوام مارچ“ منعقد کیا جا رہا ہے۔ جس میں عوام کے احساسات و جذبات کی ترجمانی کی جائے گی اور یہ شہر کے عوام کا ترجمان ثابت ہو گا۔ حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ سخت گرمی کے موسم میں شہر کے بیشتر علاقوں میں پانی کی شدید قلت سے واٹر بورڈ کے عملے اور افسران نے ٹینکرز مافیا کی ملی بھگت سے شہریوں کو پانی سے محروم کر رکھا ہے اور بعض اطلاعات کے مطابق رہائشی علاقوں کا پانی انڈسٹریل ایریا میں فراہم کیا جا رہا ہے۔ جماعت اسلامی کراچی میں قائم فیکٹریوں کو پانی کی فراہمی کی ہر گز مخالف نہیں تاہم عام شہریوں اور عوام کے پینے کا پانی انہیں ہر صورت ملنا چاہیئے۔ کراچی کے پانی کے کوٹے میں اضافہ کیا جا نا چاہیئے اور پانی کی فراہمی کے ایک بڑے منصوبے K-4کو جلد از جلد مکمل کرنے کے لیے وفاقی اور صوبائی حکومتوں کو اپنا آئینی کردار اور فرض ادا کرنا چاہیئے۔#

Youtube Downloader id

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس