Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

قرار دادنیوزی لینڈ و سری لنکا


جماعت اسلامی پاکستان کی مرکزی مجلس شوریٰ کا یہ اجلاس نیوزی لینڈ کی مساجد ، سری لنکا کی عبادت گاہوں اور ہوٹلوں پر دہشت گردوں کے حملوں اور سینکڑوں بے گناہوں کے قتل پر گہرے دکھ اور تشویش کااظہار کرتاہے۔ دین اسلام امن و سلامتی کا دین اور پوری انسانیت کے لیے رحمت کاپیغام ہے۔ اسلام کسی بے گناہ کی جان لینا تو کجا، کسی کو خوف زدہ کرنا بھی جرم قرار دیتاہے۔نیوزی لینڈ میں نماز جمعہ ادا کرنے والے درجنوں مسلمانوں اور سری لنکامیں اپنے مذہبی تہوار کے لیے جمع سینکڑوں مسیحی بھائیوں کوبے دردی سے موت کے گھاٹ اتاردینا تمام دینی ، اخلاقی اور انسانی اقدا ر کی توہین ہے۔ دہشت گردی کاارتکاب کوئی غیر مسلم کرے یا اسلام کاکوئی نام لیوا یکساں طور پر سزا وعتاب کا مستحق ہے۔

 نیوزی لینڈکی مساجد میں 50نمازیوں کی شہادت پر پوری دنیا میں اسلام اور اُمت مسلمہ سے یکجہتی و ہمدردی کی جو لہر ا بھری تھی ، سری لنکا میں ہو نے والی دہشت گردی، اسے اسلام مخالف پراپیگنڈے میں تبدیل کرنے کی ایک خوفناک سازش ہے۔ اس طرح سری لنکا میں ہونے والے حملے عملاً نیوزی لینڈ سمیت دنیا کے مختلف حصوں میں اسلام فوبیا پر مشتمل جرائم کا حصہ بن گئے ہیں۔ اجلاس اس موقع پر خودان ہندو دانشوروں کی جانب سے ظاہر کیے گئے خدشات کو بھی انتہائی اہم سمجھتا ہے ،جنہوںنے سری لنکا میں مسیحی اور ہندو کمیونٹی کے خلاف ہونے والے گزشتہ کئی حملوں کے پیچھے انتہا پسندبھارتی تنظیم RSSکے عالمی نیٹ ورک HSSکاہاتھ ثابت ہوجانے کی وجہ سے ان حملوں میں بھی ان کے ملوث ہونے کاامکان ظاہر کرتے ہوئے عالمی برادری سے اس کا سنجیدہ نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے۔

یہ اجلاس نیوز ی لینڈ میں ہونے والے قتل عام کے بعد نیوزی لینڈ کی وزیراعظم جاسینڈا آرڈروں ،ان کی حکومت ،نیوزی لینڈکے عوام اور تمام سرکاری اداروں کی جانب سے متاثرین اور اُمت مسلمہ کے ساتھ کیے جانے والے بھرپور اظہار یکجہتی کرنے کو انتہائی قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہوئے اسے دلی طور پر خراج تحسین پیش کرتاہے۔ نیوزی لینڈ حکومت کے ان اقدامات نے عالم اسلام ہی میں نہیں پوری دنیا میں ان کے احترام میں اضافہ کیاہے۔

مرکزی مجلس شوریٰ کا اجلاس سری لنکا حکومت اور دوست سری لنکن قوم سے بھی اُمید رکھتا ہے کہ دکھ کے ان نازک لمحات میں عدل وانصاف کے تمام تقاضوں کو پیش نظر رکھتے ہوئے حقیقی مجرموں کا سراغ لگا کر انہیں عبرتناک سزا یقینی بنائیں گے اور کسی بے گناہ کو کسی بھی طرح کی بے انصافی یا زیادتی کا شکار نہیں ہونے دیں گے۔

 

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس