Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

ڈالر کی قیمت بڑھنے اور سٹاک ایکسچینج میں حصص کے کاروبار کی تباہی سے قومی معیشت کا پہیہ الٹا گھوم رہا ہے ۔لیاقت بلوچ


لاہور 9جون 2019ء:نائب امیر جماعت اسلامی و سیکرٹری جنرل ملی یکجہتی کونسل پاکستان لیاقت بلوچ نے سندھ کے دوروزہ دورہ کے دوران کراچی ،حیدر آباد سکھر میرپور خاص ،ٹنڈو الہ یارمیں عید ملن کے مختلف اجتماعات سے خطاب کیا اور پشاور و اسلام آباد میں معززین سے ملاقاتیں کیں ۔لاہور واپسی پراپنے ایک بیان میں لیاقت بلوچ نے کہا کہ وفاق اٹھارویں آئینی ترمیم کے تحت صوبوں کو مکمل حقوق نہیں د ے رہا اور صوبے آئین کے مطابق بلدیاتی اداروں کو اختیار اور وسائل نہیں دے رہے جس کی وجہ سے عوامی مشکلات میں کئی گنا اضافہ ہوگیا ہے ۔مہنگائی ،بے روز گاری ،افراط زر میں ہوشربا اضافہ سے عوام کی قوت خرید ختم ہو گئی ہے ۔  سندھ اور خیبر پختونخواہ میں غیر اعلانیہ بدترین لوڈ شیڈنگ سے عوام کی زندگی اجیرن ہوگئی ہے ۔
لیاقت بلوچ نے کہا کہ حکومتی اور سرکاری اکنامک سروے تو کل آئے گالیکن عوامی معاشی سروے نوشتہ دیوار ہے کہ مہنگائی اور بے روزگاری ناقابل برداشت ہوچکی ہے ۔ڈالر کی قیمت بڑھنے اور سٹاک ایکسچینج میں حصص کے کاروبار کی تباہی سے قومی معیشت کا پہیہ الٹا گھوم رہا ہے ۔سود کی شرح اور قرضوں کا بوجھ پہلے سے بھی کئی گنا بڑھ گیا ہے ۔عوامی معاشی سروے کا اعلان ہے کہ عمران خان حکومت نااہل اور ناکام ہے اور ریاست کیلئے بدنامی کا باعث بن گئی ہے ۔
دریں اثنا ء لیاقت بلوچ نے اسلام آباد میں مرکزی مشاورتی اجلاس میں 19جون کو اسلام آباد میں ہونے والی بجٹ قومی کانفرنس کی تیاریوں کا جائزہ لیااور ہدایات دیں اور کہا کہ مہنگائی بیر وزگاری اور آئی ایم ایف سے بدترین خفیہ معاہدہ اور غلامی کے خلاف 16جون کو لاہور میں عوامی مارچ ہوگا۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی کوئی رکاوٹ پر امن احتجاج کا راستہ نہیں روک سکتی ۔ 
 

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس