Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

ہمارے لئے شیر خداحضرت علیؓ اور انکا گھرانہ بہترین نمونہ اور مشعل راہ ہیں۔حافظ نصراللہ عزیز


کراچی 28مئی 2019 جماعت اسلامی سندھ کے نائب امیر حافظ نصراللہ عزیز نے کہا ہے کہ مدینہ کی اسلامی ریاست بننے کے بعد دشمنان اسلام سازشوں میں مصروف ہوگئے، جب خلافت کا نظام قائم ہوا تو سازشی ٹولہ مزید سرگرم ہوگیا، منکرین زکواۃ کا مسئلہ ہو یا ارتدادی سرگرمیوں کا فتنہ ،مسلمہ بن کذاب کی طرف سے نبوت کا جھوٹا دعویٰ ہو یا خوارج کا سیلاب تمام تر سازشیں اسلام اور خلافت اسلامیہ کیخلاف شیطانی حربے اور منصوبے تھے، حضرت عمر بن خطابؓ،حضرت عثمان ؓ اور داماد مصطفی حضرت علی کی شہادت دشمنان اسلام کی ایک گہری اور خطرناک سازش کا نتیجہ تھی۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جماعت اسلامی لانڈھی کے حلقہ طیبہ میں یومِ علیؓ کی شہادت کے حوالے سے منعقدہ اجتماع اور افطار ڈنر سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ مدینے کی ریاست اور خلافت کا دور عدل وانصاف کا دور تھا، خلفائے راشدین پر حملہ دراصل اسلام اور اسلامی ریاست پر حملہ تھا، امام عالی مقام حضرت علی کرم اللہ وجہؓ اسلام کے وہ سپہ سالار تھے جنہیں میدان کارزار میں کوئی بھی کافر شکست نہ دے سکا اسلئے چھپ کر بزدل نے نماز اور سجدے کی حالت میں حملہ کرکے شہید کیا۔نبی مہربان نے حضرت علی ؓ کے بارے میں فرمایا تھا کہ”علی میری امت کے چیف جسٹس ہیں“یہی وجہ تھی کہ حضرت ابوبکر ؓ، حضرت عمرؓ،حضرت اور حضرت عثمانؓ سمیت تمام اکابر صحابہ ؓ اہم مسائل ومعاملات اور فیصلہ سازی میں حضرت علیؓ سے مشورہ کیا کرتے تھے اور ان کے مشورے کو بڑی اہمیت حاصل تھی، اسلئے ہمارے لئے شیر خداحضرت علیؓ اور انکا گھرانہ بہترین نمونہ اور مشعل راہ ہیں

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس