Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

مساجد ، مدارس ، مزارات ، خانقاہیں اسلام اور پاکستان دشمن قوتوں کا ہدف ہیں ۔لیاقت بلوچ



لاہور9مئی 2019ء:    نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان اور سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے نماز تراویح کے بعدنمازیوں سے خطاب اور داتا دربار دہشتگردی کے متاثرہ خاندانوںسے ملاقات کے بعد گفتگو کرتے ہوئے کہاہے کہ وطن عزیز داخلی و خارجی مسائل کی جن چوٹیوں کا شکار ہے، انہیں عبور کرنے کے لیے اندرونی استحکام ، باہمی اعتماد اور وحدت ملی ناگزیر ہے ۔ انہوںنے کہاکہ بدقسمتی سے عمران خان حکومت اپنے اسلوب حکمرانی سے مطلوب بنیادوں کو اور زیادہ کمزور کر رہے ہیں ۔ اقتصادی بحران عوام کے لیے جان لیوا اور حکومت کے لیے ڈیتھ وارنٹ بنتا جارہاہے ۔ حکومت حالات کو درست سمت پر ڈالنے کی بجائے ابھی تک بد زبانی ، تکبر اور یوٹرن کے ریکارڈ قائم کررہی ہے ۔     لیاقت بلوچ نے کہاکہ سیکورٹی فورسز اور عام شہری امن کے لیے بڑی قربانیاں دے رہے ہیں ۔ دہشت گرد ی نیٹ ورک پھر سے فعال ہوگیاہے ۔ حکمران بیرونی دشمنوں سے غافل نہ ہوں ۔ مساجد ، مدارس ، مزارات ، خانقاہیں اسلام اور پاکستان دشمن قوتوں کا ہدف ہیں ۔ دینی قوتیں اپنے اتحاد سے اسلام دشمن وار کو ناکام بنائیں گے ۔
    لیاقت بلوچ نے کہا کہ ماہ رمضان کا اپنی رحمتوں اور برکتوں کے ساتھ آغاز ہوگیاہے ۔ مساجد بھر گئی ہیں ۔ قرآن کی سماعت کے لیے لوگ جوق در جوق شریک ہورہے ہیں ، مقام شکر ہے کہ زیادہ تر نوجوان قرآن سننے میں شریک ہوتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ عوام کا دینی رجحان تقاضا کرتاہے کہ 27رمضان کو آزادی کا وجود پانے والے ملک پاکستان میں قرآن و سنت کا فلاحی نظام نافذ کر دیا جائے ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس