Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

نیوزی لینڈ میں مسجد پر حملہہ انتہائی منصوبہ بندی کے ساتھ کیا گیا ،یہ تاریخ کا ایک سیاہ باب ہے۔دردانہ صدیقی


لاہور 15مار چ 2019ء: جماعت اسلامی پاکستان حلقہ خواتین کی سیکریٹری جنرل دردانہ صدیقی نے نیوزی لینڈ کی مساجد میں دہشت گردانہ حملے کی پرزورمذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو لوگ دہشت گردی کو مذہب اسلام سے جوڑتے ہیں، نیوزی لینڈ کا انسانیت سوز سانحہ ان کی آنکھیں کھول دینے کے لیے کافی ہے۔ عالمی برادری کی ذمہ داری ہے کہ وہ دہشت گردی کا نشانہ بننے والے مسلمانوں کے ساتھ مکمل اظہار یکجہتی کرے۔ اپنے مذمتی بیان میں ان کا کہنا تھا کہ مساجد پر حملہ نیوزی لینڈ کی تاریخ کا سیاہ باب ہے، دہشتگردی کے اس واقعے نے نہ صرف دنیا بھر کے مسلمانوں بلکہ غیر مسلموں کو بھی تکلیف پہنچائی ہے، مغرب جو اسلامو فوبیا کا شدید شکار دکھائی دیتا ہے اس کو بھی اب یہ جان لینا چاہیے کہ دہشت گردی کا اسلام سے کوئی تعلق نہیں بلکہ دہشت گردی سے خود مسلمان سب سے زیادہ متاثر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حملہ انتہائی منصوبہ بندی کے ساتھ کیا گیا جو کئی طرح کے سوالات کو جنم دے رہا ہے، لازم ہے کہ واقعہ کی ہرطرح چھان بین کی جائے اور ملوث عناصر کو بے نقاب کر کے قرار واقعی سزا دی جائے۔ انہوں نے شہدا کے حق میں بلندی درجات اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کی دعا کی۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس