Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

مصنوعی اور بیساکھیوں پر کھڑی حکومتیں ملک و ملت کے لیے بوجھ بن جاتی ہیں ۔لیاقت بلوچ


لاہور8جنوری2019ء:جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل اور سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے علماءو مشائخ کے وفد اور بلوچستان کے نمائندہ وفد کے رہنماﺅں بشیر ماندائی اور ہدایت الرحمن سے گفتگو کرتے ہوئے کہاہے کہ عمران خان سرکار میں شامل کرپٹ مافیا احتساب کے عمل کو غیر موثر اور متنازعہ بنارہاہے جس سے کرپٹ عناصر محفوظ ہورہے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ فوجی عدالتوں کا قیام متنازعہ تھا لیکن دہشتگردی کے خاتمہ اور امن کے لیے سب نے قبو ل کیا ۔ معمول کا نظام اب بھی فعال او ر بااعتماد نہیں بن سکا اس لیے فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع تو ہوگی لیکن یہ سارا عمل پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں زیر بحث لایا جائے ۔

لیاقت بلوچ نے کہاکہ بلوچستان پاکستان کا اہم ترین ، حساس اور قدرتی وسائل سے مالا مال صوبہ ہے ۔ بلوچستان کے عوام اور نوجوانوں نے ہمیشہ ملک مخالف قوتوں کو اپنی سرزمین پر خود ناکام بنایا ہے ۔ پاک چائینہ اقتصادی راہداری گیم چینجر ہے ۔ ملک کے تمام حصو ں ، خصوصاً ترجیحی بنیادوں پر بلوچستان کے عوام کو راہداری منصوبہ کے ثمرات کا حق دار بنایا جائے ۔ بلوچستان میں امن قائم کرنے کے لیے سیکورٹی فورسز اور عوام نے بڑی قربانیاں دی ہیں لیکن بلوچستان میں سیاسی ہینڈلنگ حالات کو خرابی کی طرف دھکیل رہی ہے ۔ مصنوعی اور بیساکھیوں پر کھڑی حکومتیں ملک و ملت کے لیے بوجھ بن جاتی ہیں ۔

لیاقت بلوچ نے کہاکہ اسلام ہی عوام کے مسائل کا حل ہے ۔ جماعت اسلامی کا یقین ہے کہ اسلامی قوانین کے ذریعے عام غریب اور مظلوم انسانوں کو تحفظ مل سکتاہے ۔ اقلیتیں زیادہ محفوظ اور خوشحال ہوں گی ۔ شہریوں کے حقوق کو یقینی بنانے کے لیے بلدیات کا فعال اور بااختیار نظام ، زراعت اور محنت کشوں کو باعزت و باوقار نظام دیا جائے گا ۔ علماءو مشائخ قوم پر مسلط کرپٹ نااہل اور کھلنڈرے ٹولوں سے نجات دلاسکتے ہیں ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس