Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

توانائی بحران پر قابو پانے کے لئے کالاباغ سمیت تمام ڈیمز فوری تعمیر کئے جائیں۔امیرالعظیم


لاہور3 جنوری2018ء: امیرجماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب امیر العظیم نے کہا ہے کہ گیس اور بجلی کی لوڈشیڈنگ نے عوام کو پریشان کر کے رکھ دیا ہے ۔ سر دی میں اضافے کے ساتھ جہاں ایک طرف گیس بحران شدت اختیار کرتاجارہا ہے وہیں دوسری جانب بجلی کی لوڈشیڈنگ نے بھی دوبارہ سر اٹھانا شر وع کر دیا ہے ۔موجودہ حکمران بھی ماضی کے حکمرانوں کے نقش قدم پر چل رہے ہیں ۔توانائی بحران دن بدن سنگین ہوتا چلا جا رہا ہے، اس کے سد باب کے حوالے سے حکمرانوں کی جانب سے کوئی ٹھوس منصوبہ بندی نہیں کی جارہی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز لاہور میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ ماضی میں حکومتیں توانائی کے کاغذی منصوبوں کاافتتاح کرتی رہی ہیں جس کے نتیجہ میں عوام کودرپیش لوڈشیڈنگ کے مسئلہ میں کسی قسم کی کوئی کمی واقع نہیں ہوئی، آج بھی یہ مسئلہ جوں کا توں ہی کھڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ المیہ تو یہ ہے کہ موجودہ حکمرانوں کی ناقص پالیسیوں اور غلط ترجیحات کی وجہ سے آئندہ بھی اس مسئلہ کا کوئی پائیدار حل نکلتا نظر نہیں آتا۔توانائی بحران پر قابو پانے کے لیے ضرورت اس امر کی ہے کہ کالاباغ ڈیم سمیت چھوٹے بڑے پانی کے ذخائر کوفوری تعمیر کیاجائے۔انہوں نے کہاکہ نئے پانی کے ذخائر بنانے سے جہاں ایک طرف اربوں گیلن ایکڑفٹ پانی سمندر کی نذرہونے سے بچایاجاسکتا ہے وہاں کاشت کاری کے شعبہ میں بھی انقلاب برپاہوگا۔نئے ڈیم بنانے سے روزگار کے مواقع پیداہوں گے اور عوام کو سستی بجلی میسر آئے گی۔ امیر العظیم نے مزیدکہاکہ فرنس آئل سے بجلی پیداکرنا انتہائی مہنگاطریقہ تھا۔خوش آئند بات یہ ہے کہ حکومت نے اس پر پابندی لگا کر اچھا اقدام کیا ہے ۔ فرنس آئل سے مکمل طور پر نجات حاصل کرنے کے لئے پن بجلی ،ونڈ بجلی اورکوئلے سے بجلی حاصل کرنے کے منصوبوں پر ہنگامی اقدامات کیے جانے چاہئیں بصورت دیگر اس حکومت کے دور اقتدار میں بھی توانائی بحران ختم ہوتانظر نہیں آتا۔ 

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس