Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

منی لانڈرنگ کیس میں آصف زرداری سمیت172 افراد کے نام ای سی ایل میں ڈالنا خوش آئندہے۔امیرالعظیم


لاہور29 دسمبر2018ء:امیرجماعت اسلامی صوبہ وسطی پنجاب امیر العظیم نے کہا ہے کہ منی لانڈرنگ کیس میں سابق صدر آصف علی زرداری سمیت172 کرپٹ افراد کے نام ای سی ایل میں ڈالنا خوش آئند اقدام ہے۔جس کسی نے بھی قومی خزانے کو نقصان پہنچا یا ہے اس کا محاسبہ ہونا چاہئے اور اس حوالے سے بلا تفریق کارروائی کی جانی چاہے ۔ پیپلزپارٹی سابق صدر آصف زرداری اور دیگر رہنماؤں کے حوالے سے جے آئی ٹی کے انکشافات کے بعد بوکھلاہٹ کاشکار ہوچکی ہے اورمیڈیا پرمحض بیان بازی کاسہارالے کر اپنے آپ کومعصوم اور بے گناہ ثابت کرنے کی کوشش کررہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز لاہورمیں مختلف پروگرامات سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ ہر سال ایک ہزار ارب روپے کی منی لانڈرنگ ہو تی ہے،جو کہ تشویش ناک امرہے۔اگر آصف زرداری ،وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ اور پیپلزپارٹی کے دیگر رہنماؤں نے منی لانڈرنگ نہیں کی ہے تو پھر ڈراور خوف کااظہارکیوں کیاجارہاہے؟۔انہوں نے کہاکہ پیپلزپارٹی پانامالیکس اسکینڈل میں مسلم لیگ(ن) کے سربراہ میاں نوازشریف کے احتساب پر ان کی حمایت کررہی ہے ۔ کرپٹ عناصر چاہے ان کو تعلق پیپلزپارٹی ،مسلم لیگ (ن)،مسلم لیگ(ق) یاتحریک انصاف سے ہوسب کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائے جائے اور ایسے بدعنوان عناصر سے قومی خزانے سے لوٹی گئی دولت وصول کی جائے۔ پاکستان میں کرپشن کاخاتمہ کیے بغیر ترقی وخوشحالی کی منزل نصیب نہیں ہوسکتی۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان کی بقاء اور سلامتی کے لئے نیک،ایماندار اور صالح قیادت کی ضرورت ہے ۔ سرمایہ داروں،جاگیرداروں اور وڈیروں سے چھٹکارہ حاصل کرنے کے لئے قوم کو متحد ہونا پڑے گا۔انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف کی حکومت کو بر سر اقتدار آئے چار ماہ ہو گئے ہیں مگر ابھی تک عوام کے مسائل میں کمی کی بجائے اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔امیر العظیم نے مزید کہاکہ ماضی کے حکمرانوں نے غیر ملکی تابعداری پر مبنی پالیسیوں،بدترین کرپشن،اور انتہائی ناقص کارکردگی کی وجہ سے ملکی سلامتی و بقاء اور آزادی کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا ہے،جس کے نتیجہ میں ملکی معیشت تباہ و برباد ہوچکی ہے۔


 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں

سوشل میڈیا لنکس