Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

وفاقی حکومت تھیلسمیاء فری پاکستان پروگرام کا اعلان کرے۔ ہیلپ انٹرنیشنل سیمینار


کراچی20 دسمبر2018:حکومت پاکستان تھیلسمیاء فری پاکستان پروگرام کا اعلان کرے، تھیلسمیاء کی روک تھام کے لیے قانون پر عملدرآمد کو یقینی بنائے ،صرف قانون سازی مسئلے کا حل نہیں بلکہ قانون پرمکمل طور پر عملدرآمدسے ہی اس بیماری سے نجات حاصل کی جاسکتی ہے ،اگر ہم عوامی سطح پر آگاہی کا کام کریں اور حکومت اپنی سرپرستی میں یونین کونسلوں کی سطح پر اس مہم کوتیز کردے تو وہ دن دور نہیں جب پاکستان سے تھیلسمیاء کا خاتمہ ہوجائے گاان خیالات کااظہارمقررین نے ہیلپ انٹرنیشنل ویلفئیرٹرسٹ کے زیر اہتمام وفاقی اردو یونیورسٹی کے تعاون سے ڈاکٹر عبدالقدیر خان آڈیٹوریم میں منعقدہ تھلیسیمیا آگاہی سیمینارسے خطاب کرتے ہوئے کیا، انسٹی ٹیوٹ آف بائیولوجیکل بائیو کیمیکل اینڈ فارماسیوٹیکل سائنس ڈائو یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسزکے ڈائریکٹرپروفیسر ڈاکٹر رفیق خانانی نے اپنے صدارتی خطبہ میں کہا کہ ہیلپ انٹر نیشنل ویلفیئر ٹرسٹ تھیلسیمیاء آگاہی مہم 2018-19میں طلبہ و طالبات اور اساتذہ کو دینا بہترین کاوش ہے کیونکہ یہی نوجوان معاشرے کے مختلف شعبوں میںجاکر ملک کی تعمیر و ترقی میں اپنا کردار ادا کریں گے اس لیے اگر پہلے مرحلے پر ہی ان انہیں سماجی خدمت کے حوالے سے تیار کیا جائے تو آگے چل کر یہ ملک کے ذمہ دار شہری بن سکیں گے اور تعمیری کاموں میں اپنی صلاحیتوں کو صرف کریں گے،ہیلپ انٹر نیشنل ویلفیئر ٹرسٹ کے چیئر مین رئوف تابانی نے کہاکہ تھیلسیمیاء کے حوالے سے ہم عالمی تنظیموں کے ساتھ کام کررہے ہیں اور ہم اس سینٹر میں نہ صرف بچوں کو علاج کی سہولیات دے فراہم کررہے ہیں بلکہ تفریحی کے مواقعے بھی فراہم کرتے ہیں انہوں نے کہا کہ ہیلپ انٹرنیشنل کے تحت تھیلسیمیاء سے متاثرہ بچوں کے لیے جدید سہولیات سے آراستہ اسپتال بنانے کا منصوبہ کا بھی آغاز ہوچکا ہے جس میں تھلیسمیاء اور خون سے متعلق تمام بیماریوں کے علاج اور تشخیص کی سہولتیں دستیاب ہونگی میں اس کا سنگ بنیادجلد رکھا جائے گا ، ایچ آئی ڈبلیو ٹی کے سی ای او سید عارف علی نے کہا کہ نے کہا کہ خاندانوں میں شادیاں تھیلسمیاء کی ایک بڑی وجہ ہے اسے کنٹرول ہونا چاہیے اس آگاہی کو پورے پاکستان میں پھیلانا چاہیے ،اس لیے ہم نے خواتین اساتذہ کو یہاں جمع کیا ہے تھیلسمیاء آگاہی مہم کے چیئرمین ڈاکٹر خالد بھمبا نے کہا کہ خواتین کی کی آگاہی اس میں اہم کردارادا کر سکتی ہیںکیونکہ اگر ہم ایک ماں کوآگاہی دیں تو پورے خاندان کو آگاہ کر سکتی ہے ۔تقریب میں ’’تو ہے پھول میرے گلشن کا‘‘ تھیلسمیاء کی بیماری کے حوالے سے خصوصی ٹیبلو بھی پیش کیا گیا۔جسے شرکاء نے بہت پسند کیا ۔، چیف ایونٹ انچارج سید محمد اصغر نے تمام اساتذہ و طلبہ کا شکریہ ادا کیا، ، تقریب میں شہر کی معروف شخصیات اور اساتذہ نے بڑی تعداد میں شرکت کی جبکہ والدین اساتذہ اور تھیلسمیاء سے متاثرہ بچوں اور والدین کی بھی بڑی تعداد موجود تھی، تقریب کے آخر میں ہیلپ انٹر نیشنل ویلفیئر ٹرسٹ کے والنٹئر اور عہدیدران میں شیلڈز بھی تقسیم کی گئیں۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں



سوشل میڈیا لنکس