Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

ملعونہ آسیہ کے بارے فیصلے نےثابت کردیا کہ گستاخانِ رسول کے فیصلے قاضی نہیں غازی کیا کرتے ہیں۔زبیرگوندل


لاہور31  اکتوبر2018ء: مرکزی صدر جےآئی یوتھ پاکستان زبیراحمد گوندل نے آسیہ مسیح کی سپریم کورٹ کے جانب سے سزا معافی پر اپنے شدید ردِعمل کااظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ  ہم اس فیصلے کی مذمت کرتے ہیں۔اس فیصلے کو مسترد کرتے ہیں۔جے آئی یوتھ پاکستان کے نوجوان اس عدالتی فیصلے کے خلاف ملک بھر میں احتجاج کریںگے۔تمام نوجوانوں سے پرامن رہنے کی اپیل کرتے ہیں۔ ناموس رسالت ﷺ کے دفاع کے لیے کسی قربانی سے پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ نوجوان نبیؐ سے عشق کے اظہار کے لیے پرامن احتجاج کریں۔ احتجاج کے دوران قومی املاک کو کسی قسم کا نقصان نہ پہنچایاجائے۔ عدالتی فیصلے نے ایک بار پھر ثابت کردیا ہے کہ گستاخانِ رسول کے فیصلے قاضی نہیں غازی کیا کرتے ہیں۔ پاکستان میں اکثریت اسلام پسندوں کی ہے لیکن اسے سیکولر بنانے کی گھٹیا اور ناکام کوششیں کی جارہی ہیں جنہیں کسی طور بھی برداشت نہیں کیا جاسکتا۔ حکومت وقت کو خبردار کرتے ہیں کہ وہ قادیانیوں اور گستاخون کی پشت پناہی سے باز آجائے

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں

سوشل میڈیا لنکس