Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اسلامی شعور کی بیداری اور کردار سازی آج کے دور کا سب سے بڑا چیلنج ہے۔عبدالرشیدترابی


باغ8 اگست2018ء: کنونیئر کل جماعتی کشمیر رابطہ کونسل ممبر قانون ساز اسمبلی عبدالرشید ترابی نے کہا ہے کہ کشمیری مقبوضہ کشمیر میں 14اگست کو ہر جگہ پاکستانی پرچم کشائی کی تقاریب کرتے ہیں ،حکومت پاکستان عبوری ہو یا آنے والی کشمیریوں کی توقعات کے مطابق اپنا کردار ادا کرے،اسلام کے شعور کی بیداری اور کردار سازی آج کے دور کا سب سے بڑا چیلنج ہے دنیا میں جہاں بھی سیاسی اور تہذیبی انقلاب برپا ہوا وہاں فکری شعور بیدار ہوا علم دوستی اور کتاب سے محبت قابل رشک مشن ہے تحریک محنت نے قوم کو کتاب سے دوستی اور اس کی کردار سازی کر کے قابل تحسین کام کیا ہے ،ان خیالات کااظہار انہوں نے تحریک محنت ضلع باغ کے زیر اہتمام تربیت گا ہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا ،اس موقع پر تحریک محنت پاکستان کے صدر خالد بخاری،سید سلیم گردیزی،تحریک محنت آزادکشمیر کے صدر طارق چغتائی سمیت دیگر قائدین نے خطاب کیا ،اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے عبدالرشید ترابی نے کہاکہ مغرب میں ٹیکنالوجی اور تہذیب میں ترقی کی ہے اس کی بنیاد علم دوستی اور علم کا فروغ جب کہ یہ مسلمانوں کا علمی ورثہ ہے مسلمانوں نے جب بھی بالادستی حاصل کی اس کی بنیاد علم دوستی اور کردار سازی تھا آج کے دور کا بھی یہی تقاضا ہے قرآن وسنت کی طرف رجوع کیا جائے اس سے اپنے اخلاق اور کردار بہتر کیے جائیں قرآن وسنت کی ہدایات اور احکامات کے مطابق اپنی زندگیوں کو ڈالا جائے ،70سال سے مسلم دنیا میں سید مودودی ؒ اور اسلامی تحریک کے دیگر اہل دانش مسلمانوںمیںاہم کردار ادا کیا ،ان کا علمی ذخیرہ ہمارے پاس ہے جس سے استفاد ہ کرنے کی ضرورت ہے ،ترکی ،مصر سمیت جن ممالک میں اسلامی تحریک نے پیش رفت کی ہے وہاں فکری اور علمی سطح پر پیش رفت کی گئی جس کا نتیجہ سیاسی پیش رفت سے نکلا پاکستان اور آزادکشمیرمیں بھی ہمیں بڑے پیمانے پر اسلامی لٹریچر کو عام کرنے کا اہتمام کرنا چاہیے پاکستان میں تلخ تجربات نعرے اور دعوے ہمیشہ غلط ثابت ہوئے پاکستان اور آزادکشمیر میں مسائل کا واحد حل قرآن وسنت کے مطابق معاشرے کا قیام اور یہی تبدیلی کی روح ہے چہرے نہیں نظام بدلنے سے تبدیلی آئے گی آزاد خطہ نظریاتی خطہ ہے مقبوضہ کشمیر کے اند ر آج بھی اسلام اور پاکستان کے لیے قربانیاں دی جارہی ہیں کشمیری قوم اسلام سے وابستگی برقرار رکھے ہوئے ہے 14اگست کو ہر سمت پاکستانی پرچم لہرائے جاتے ہیں کشمیری شہداء کو پاکستانی پرچموں میں لپیٹ کر ان کی وصیت کے مطابق دفنایا جاتا ہے اس سے زیادہ وہ پاکستان کے لیے اور کیا کرسکتے ہیں لیکن پاکستان میں حکومتی اور عوامی سطح پر ان کی توقعات پوری نہیں کی جارہی جب بھی سید علی گیلانی اور دیگر قائدین حریت سے رابطہ ہوتا ہے تو وہ گلہ کرتے ہیں کہ پاکستان اورآزادکشمیر کی حکومت وہ کردار ادا نہیں کرپا رہی جو مطلوب ہے انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی کا شروع دن سے کشمیر کی آزادی کے لیے جدوجہد کرنا ترجیح اول رہا ہے لیکن آزادی کی تحریک کو منزل تک کوئی ایک جماعت نہیں پہنچا سکتی بلکہ سب جماعتیں اور حکومت مل کر آزادی کی منزل حاصل کرسکتی ہیں انہوں نے کہاکہ ہندوستان نے گورنر راج نافذ کر کے عدالتی ہتھکنڈے کے ذریعے مقبوضہ کشمیرمیں مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنے کی سازش شروع کی ہوئی ہے حکومت پاکستان وقت ضائع کیے بغیر بھارت کو بے نقاب کرے اور عالمی عدالت انصاف کا دروازہ کھٹکھٹائے ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں

سوشل میڈیا لنکس