Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

انتخابی مہم میں تشدد ، دہشتگردی اور باہم شدت جذبات کا بڑھتا رجحان خطرناک ہے ۔لیاقت بلوچ


لاہور 11جولائی 2018ء:متحدہ مجلس عمل اور جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل اور این اے 130 لاہور سے امیدوار قومی اسمبلی لیاقت بلوچ نے پشاور میں ہارون بلور اور چودہ سیاسی کارکنوں کی شہادتوں پر دکھ ، صدمہ اور شدید احتجاج کیا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ بلور خاندان کی قربانیاں سیاسی تاریخ کا حصہ ہیں ۔ انتخابی مہم میں تشدد ، دہشتگردی اور باہم شدت جذبات کا بڑھتا رجحان خطرناک ہے ۔ سیکورٹی ادارے اور الیکشن کمیشن ضابطہ اخلاق اور سیاسی اخلاقیات کی خلاف ورزی پر سخت ترین اقدامات کرے ۔ جمہوری اور سیاسی عمل کو ذاتیات اور سیاسی دشمنیوں کا شاخسانہ نہ بنایا جائے ۔

لیاقت بلوچ نے اچھرہ ، شاہ کمال ، کرنال پورہ ، مسلم ٹان میں کارنر میٹنگز اور غازی روڈ پر انتخابی دفتر کے افتتاح کے موقع پر سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ سیاسی انتشار ، کرپٹ سیاسی دھڑوں ، نااہل اور کرپٹ ناکارہ سیاسی مافیا سے نجات کا وقت آگیاہے ۔ انہوں نے کہاکہ عوام دینی جماعتوں کے اتحاد متحدہ مجلس عمل کا ساتھ دیں ، انشاءاللہ ملک و ملت بحرانوں سے نکل آئیں گے ۔ عوام کے مسائل کا حل نظام مصطفی اور اسلام کے دائمی احکامات میں ہی ہے۔ 

لیاقت بلوچ نے کہاکہ متحدہ مجلس عمل نظام مصطفےٰ کا قیام ، آئین اور قانون کی بالادستی ، خواتین ، نوجوانوں اور اقلیتوں کے لیے باعزت سازگار نظام دے گی ۔ قومی وسائل کی منصفانہ تقسیم ، پانی کی قلت اور سستی بجلی کی فراہمی کے لیے ڈیم تعمیر کریں گے ۔ محب وطن عوام کے ہر طبقہ پر اعتماد کر کے ملک میں خود انحصاری لائیں گے ۔ قرضوں اور سود کی لعنت سے نجات دلائیں گے ۔

کارنر میٹنگز سے احمد سلمان بلوچ ، مولانا احرار ، عبدالودودقاضی ، عبدالرحمن بلوچ ، عاصم مخدوم اور احمد رضا بٹ نے بھی خطاب کیا ۔ علاقہ کے علماء، معززین اور سماجی شخصیات نے لیاقت بلوچ کی حمایت کا اعلان کیا اور مطالبہ کیاکہ اسلام آباد ہائیکورٹ کے عدالتی فیصلے میں قانون ختم نبوت پر کاری وار کے ملزمان کے خلاف سخت کاروائی کی جائے ۔ عدالتی فیصلوں پر عملدرآمد میں پسند اور ناپسند کا دروازہ بند کیا جائے ۔ 

ہارون بلور سمیت 20سے زائد افراد کی شہادت ایک المناک واقعہ ہے ،الیکشن کو پرامن بنانے کیلئے مو ¿ثر اقدامات کریں۔ڈاکٹر معراج الہدیٰ صدیقی کراچی(اسٹاف رپورٹر)11جولائی2018 امیرجماعت اسلامی سندھ ڈاکٹر معراج الہدیٰ صدیقی نے پشاور میںہونے والے خودکش بم حملے میں بشیر بلور کے صاحبزادے ہارون بلور کی شہادت پر گھرے دکھ اور غم کا اظہار کرتے ہوئے ان کی مغفرت اور پسماندگان کیلئے صبر جمیل کی دعا کی ہے ۔انہوں نے آج ایک بیان میں مزید کہا کہ پشاور بم دھماکہ میں ہارون بلور سمیت 20سے زائد افراد کی شہادت ایک المناک واقعہ ہے جس کی جتی بھی مذمت کی جائے وہ کم ہے، اس وقت جب الیکشن میں صرف چند دن باقی رہ گئے ہیں ایسے واقعات کا رونما ہونا الیکشن کے عمل پر شکوک پیدا،سیاسی جماعتوں،امیدواروں سمیت عوام میں شدید خوف وہراس پیدا کرسکتی ہے جس کی وجہ سے بیرونی اور اندرونی دشمن قوتیں بھرپور فائدہ اٹھاسکتی ہے جس سے الیکشن پر شدید قسم کے اثرات مرتب ہوسکتے ہیں جو ملک اورعوام کیلئے بھی کسی حادثے سے کم نہیں ہوگا۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ ملکی سیکورٹی ادارے، ہماری خفیہ ایجنسیاں ملک کے اندر موجود دہشتگردوں اور ان کے بیرونی آقاں اور تحفظ فراہم کرنے والوں کیخلاف بھرپور کاروائی،الیکشن کیلئے پرامن بنانے کیلئے مو ¿ثر اقدامات کریں تاکہ عوام 25جولائی کو بغیر کسی ڈر اور خوف کے پولنگ اسٹیشنوں پر جاکر اپنا ووٹ کاسٹ کریں اور اپنے نمائندے منتخب کرسکیں۔#

 

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس