Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

گنے ،آلو،چاول اور کپاس کے کاشتکاروں کولوٹنے کے بعد اب گندم کے کاشتکاروں کولوٹاجارہاہے


لاہور10 مئی 2018ء:       کسان بورڈ پاکستان کے مرکزی صدر چوہدری نثار احمد نے متحدہ مجلس عمل پاکستان کے تیرہ مئی کے جلسہ عام میں ہزاروں کسانوں کی شرکت کو یقینی بنانے کیلیے پنجاب کے کئی اضلاع کا ہنگامی دورہ کیاگزشتہ روزاپنے دفتر میںکسان بورڈ کے تنظیمی اجلاس سے خطاب کرتے انہوں نے کہا کہ ہر طبقہ زندگی کے ساتھ اسلام انصاف کرنے کا درس دیتا ہے مگر ہمارے ملک میںکسانوں اور کھیت مزدوروں کے ساتھ سوتیلا سلوک کیا جاتاہے ہم اس مسئلہ کو حکمرانوں تک پہنچائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ کپاس اور چاول کے کاشتکاروں کو کاٹن ملوں اور رائس ملوں نے لوٹ لیا ہے اور انکی فصلات کو آدھی قیمت بھی نہیں ملی اور اب شوگر مل مالکان نے گنے کے کاشتکاروں کو لوٹنے کی انتہا کردی ہے۔کروڑوں روپے کا آلو کھیتوں میں پڑا گل سڑ رہا ہے ۔اور اب گندم کے خریداری سنٹروں پر محکمہ فوڈ، حکمران طبقہ کے فلور مل مالکان اور آڑھتی لوٹ  رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ انشا ء اللہ ہزاروں لٹے پٹے کسان ملک بھر سے متحدہ مجلس عمل کے تیرہ مئی کو متحدہ مجلس عمل کے مینار پاکستان میں  جلسہ میںشریک ہونگے اور اس تاریخی موقع پر کسانوں کے مسائل پر مبنی ایک تاریخی یادداشتایم ایم اے کے مذہبی رہنمائوں کو پیش کی جائے گی۔انہوں نے کہا کسان بورڈ کے ماہرین پر مبنی ایک اعلی سطحی کمیٹی نے یاداشت کی تیاری کا کام شروع کر رکھا ہے جو چاروں صوبوں کے کسانوں کے مشورہ سے یہ یادداشت تیار کریں گے۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس