Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

عوام کو صحت کی سہولت دینا حکومت اور ریاست کی اولین ذمہ داری ہے مگر کوئی حکومت بھی اس ذمہ داری کو پورا نہیں کر سکی ۔امیرالعظیم


لاہور 11مارچ 2018ء:جماعت اسلامی پاکستان کے ترجمان امیر العظیم نے کہاہے کہ شہریوں کو صحت کی سہولت دینا حکومت اور ریاست کی اولین ذمہ داری ہے مگر بدقسمتی ہے کوئی حکومت بھی اس ذمہ داری کو پورا نہیں کر سکی ۔ حکمران خود تو اپنے علاج کے لیے امریکہ اور لندن چلے جاتے ہیںجبکہ کروڑوں پاکستانی علاج کی بنیادی سہولت سے محروم ہیں ۔ لاہور جیسے بڑے شہر اور صوبائی دارالحکومت میں سرکاری ہسپتالوں میں ایک ایک بیڈ پر چار چار مریض لیٹے ہوئے ہیں ۔ حکمرانوں کو پلوں اور سڑکوں سے ہی فرصت نہیں کہ وہ لوگوں کو تعلیم اور علاج جیسی سہولتوں کے بارے میں سوچیں ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے انتخابی حلقہ این اے 128 کی یونین کونسل 115 میں فری میڈیکل کیمپ کے افتتاح کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ 

امیر العظیم نے کہاکہ ملک میں کالے یرقان ، دمہ اور کھانسی متعدی جیسی بیماریوں میں تیزی سے اضافہ ہورہاہے ۔ خاص طور پر صاف پانی نہ ملنے کی وجہ سے ہیپاٹائٹس کی بیماری بڑی تیزی سے پھیل رہی ہے اور اس کا مہنگا علاج کرانا عام آدمی کے بس کی بات نہیں ۔ ریاست کی ذمہ داری ہے کہ شہریوں کو اچھی خوراک ، پینے کا صاف پانی اور فضائی آلودگی سے پاک ماحول مہیا کرے ۔ انہوںنے کہاکہ دل کی بیماری میں مبتلا مریضوں کے لیے کارڈیالوجی سینٹر میں ناکافی سہولتوں کی وجہ سے روزانہ سینکڑوں مریض لائنوں میں لگے اپنی باری کا انتظار کرتے ہیں اور جن مریضوں کو ایمر جنسی آپریشن ضرورت ہوتی ہے ، انہیں بھی تین چار ہفتے انتظار کرنے کی پرچی تھما دی جاتی ہے اور ان میں سے درجنوں مریض علاج نہ ہونے کی وجہ سے موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ سرکاری ہسپتالوں کی حالت زار کی طرف کوئی توجہ نہیں دی جارہی ان حالات میں مختلف رفاہی ادارے اور فلاحی تنظیمیں غنیمت ہیں جو عوام کو تعلیم اور مفت علاج کی سہولت فراہم کر رہی ہیں ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں

سوشل میڈیا لنکس