Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

دینی جماعتیں فساد زدہ سیاسی ماحول میں تعمیری و مثبت کردار ادا کریں ۔لیاقت بلوچ


لاہور12 فروری 2018ء:جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل اور سابق پارلیمانی لیڈر لیاقت بلوچ نے لاہور میں مرکزی مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہاہے کہ وفاقی اور صوبائی حکومتیں عوام کی فلاح کے لیے آئین ، قانون اور ضابطوں کی پاسداری کی بجائے صرف اور صرف اقتدار ، نمائشی اقدامات اور ڈنگ ٹپاﺅ پالیسی پر قائم ہیں جس سے ملک بھر میں تعلیم ، صحت ، روزگار ، زندگی کی خوشیاں ، ناممکن اور مشکل تر بنا دی گئی ہیں ۔ آئین و قانون کی بالادستی ، امانت و دیانت ، اہلیت کے ساتھ ریاستی نظام چلانے سے پاکستان مستحکم اور باوقار ہوگا ۔ پی پی پی کے بعد مسلم لیگ بھی اپنے عروج سے زوال کی جانب گامزن ہے ۔ مسلم لیگ کے حامیوں کے پاس پارٹی اور پارٹی قیادت کے دفاع کے لیے کچھ نہیں بچا ۔

لیاقت بلوچ نے کہاکہ دینی جماعتیں فساد زدہ سیاسی ماحول میں تعمیری و مثبت کردار ادا کریں گی ۔ کرپشن کے تمام عنوانات ، فہرستوں اور میگاسکنڈلز میں دینی رہنماﺅں کے نام نہیں۔ نام نہاد لبرل اور سیکولر مقتدر طبقہ ہی قوم پر کرپشن اور ذلت مسلط کر رہاہے ۔ محبان دین اور محب وطن عوام 2018 ءکے انتخابات میں اہلیت ، امانت و دیانت اور آئین ، قانون ،عدلیہ کی آزادی اور تحفظ کے لیے انقلابی کردار ادا کریں گے ۔

لیاقت بلوچ نے سینئر ایڈووکیٹ ، انسانی حقوق کے تحفظ کی فعال رہنما عاصمہ جہانگیر مرحومہ کے گھر جا کر خاندان کے افراد سے تعزیت کی اور کہاکہ قانون و عدلیہ کا محاذ ایک قابل ، فعال اور جری قانون دان سے محروم ہوگیاہے ۔ آمریتوں ، عدلیہ کی آزادی اور انسانی بنیادی حقوق کے تحفظ کے لیے مرحومہ کا کردار زندہ رہے گا ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس