Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

دبئی میں7ہزار پاکستانیوں کی منی لانڈرنگ کے ذریعے100ارب روپے کی جائیدادیں تشویشناک ہیں۔میاں مقصوداحمد


لاہور6فروری 2018ء:امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمد نے کہاہے کہ میڈیا رپورٹ کے مطابق دبئی میں7ہزار سے زائد پاکستانیوں کی منی لانڈرنگ کے ذریعے 100ارب روپے کی جائیدادیں تشویش ناک اور حکمرانوں کی ناقص پالیسیوں کا منہ بولتاثبوت ہے۔سیاستدانوں سمیت ریٹائرڈجنرلز،بیوروکریٹس اورسرمایہ دار طبقہ اس دوڑ میں سب سے آگے ہے۔غریب عوام ایک طرف دووقت کی باعزت روٹی کو ترس رہے ہیں،بے روزگاری نے مزدوروں کو فاقہ کشی پر مجبور کردیا ہے اور عوام کا معیار زندگی بری طرح متاثر ہوچکاہے جبکہ دوسری جانب اشرافیہ کا شاہانہ طرززندگی غریب عوام کے زخموں پر نمک پاشی کے مترادف ہے۔ان خیالات کااظہار انہوں نے گزشتہ روز لاہور میں عوامی وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہاکہ جب تک لوٹ کھسوٹ کی دولت بیرون ملک سے واپس پاکستان نہیں لائی جاتی اور حکمران اپنی عیاشیاں نہیں چھوڑدیتے پاکستان میں معاشی انقلاب برپا نہیں ہوسکتا۔دولت کی غیر منصفانہ تقسیم کے باعث عوام میں احساس محرومی بڑھ رہا ہے۔ضرورت س امر کی ہے کہ حکمران محب وطن بن کر سوچیں اورذاتی مفادات کو بالائے طاق رکھتے ہوئے ملکی اور قومی مفادات کو ترجیح دیں۔انہوں نے کہاکہ سب کو مل کر ملک وقوم کی فلاح وبہبود کے لیے اپنا مثبت کردار اداکرنا ہوگا۔مہنگائی،بے روزگاری،لاقانونیت،دہشتگردی،لوڈشیڈنگ جیسے بڑے بڑے مسائل پریشان کن حد تک بڑھ چکے ہیں۔انہوں نے کہاکہ حکومت کی عاقبت نااندیش پالیسیوں سے معاشی بحران شدیدترہوتاجارہا ہے۔حکمرانوں کی لوٹ ماراور دن بدن بڑھتی ہوئی مہنگائی وبے روزگاری کی وجہ سے غریب عوام پستے چلے جارہے ہیں۔حکومت عوام کے حقیقی مسائل سے لاتعلق ہوچکی ہے۔میاں مقصوداحمد نے مزیدکہاکہ ٹیکس چوراور قومی خزانہ لوٹنے والوں کا محاسبہ وقت کا تقاضا ہے۔پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ ہواہے کہ عدلیہ نے کسی وزیر اعظم کو کرپشن کی بنیاد پر نااہل قراردے کر گھربھیجا ہے۔احتساب کایہ سلسلہ ملک میں کرپشن کے خاتمے تک رکنا نہیں چاہئے اور کرپٹ افراد سے لوٹی گئی ملکی دولت کی پائی پائی وصول کی جانی چاہئے ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں

سوشل میڈیا لنکس