Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

ملک بھر کی نہروں میں جلد از جلد پانی چھوڑا جائے۔چوہدری نثاراحمد


لاہور24جنوری 2018ء:راجباہ نیاز بیگ سمیت ملک بھر کی نہروں میں جلد از جلد پانی چھوڑا جائے ان خیالات کا اظہارکسان بورڈ پاکستان کے صدر چوہدری نثار احمد نے راجباہ نیاز بیگ کے متا ثرین سے گفتگو کرتے کیا۔ راجباہ نیاز بیگ کے کاشتکاروں کے ایک وفد نے گزشتہ روزکسان بورڈ ضلع لاہور کے سابق صدر چوہدری نور احمد کی قیادت میں ان سے ملاقات کی اور انہیں راجباہ نیازبیگ کی طویل بندش سے کھڑی فصلوں کے شدید نقصان  کے بارے اپنی تشویش سے آگاہ کیا۔کاشتکاروں کے وفد سے گفتگو کرتے کسان بورڈ پاکستان کے صدر چوہدری نثار احمدنے کہا کہ مذکورہ راجباہ نیازبیگ پہلے بھی لاہور میں ہربنس پورہ کا دنیا کا طویل ترین انڈر پاس تعمیر ہونے کی وجہ سے بند رہا اور اس میں پانی نہ آنے سے اس راجباہ پر واقع سیکڑوں دیہات کی ہزاروں ایکڑ ُ  فصلیں تباہ ہو گئیں جس سے کسانوں کو کروڑوں کا نقصان ہوا  اور اب پھر با وثوق ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ اب بی آر بی نہر میں 27جنوری کو پانی چھوڑا جا رہا ہے مگر راجباہ نیاز بیگ میں نہیں چھوڑا جا رہا۔کہا جا رہا ہے کہ لاہور میں نہر پر خوبصورتی کیلیے  پودے لگانے کیلیے نہر کو بند رکھا جائے گا۔پہلے ہی طویل عرصہ تک نہر بند رہنے کی وجہ سے کسانوں کا کروڑوں کا نقصان پہنچ چکا ہے اور اب پھر نہر بند ہونے سے کسانوں کی کھڑی فصلیں تباہ ہو جائیں گی ۔انہوں نے کہا کہ راجباہ نیاز بیگ سمیت ملک بھر کی نہروں میں جلد از جلد پانی چھوڑا جائے تاکہ لاکھوں ایکڑ پر کھڑی فصلیں تباہ ہونے سے بچ رہیں ۔انہوں نے کہا پہلے ہی کسانوں کو شوگر ملوں نے لوٹ کرکنگال بنا دیا ہے اور اب رہی سہی کسر نہروں کا پانی بند کرکے انکی معیشت کو مکمل تباہی سے ہمکنار کیا جا رہا ہے۔کئی جگہ پرابھی گندم کی فصل کو پہلا پانی بھی نہیں لگایا گیا اور اگر پہلا پانی لیٹ ہو جائے تو گندم کی فصل 25  فی صد کم ہو جاتی ہے۔ پانی نہ آنے سے جہاں ہزاروں ایکڑ پر کھڑی فصلیں تباہ و بربادہو جائیں گی وہاںدرجنوں مویشی بھی پانی نہ ملنے کی وجہ سے تڑپ تڑپ کر ہلاک  ہو جائیں گی ۔انہوں نے کہا کہ ایک طرف تو صوبائی حکومت پانی کی سپلائی روک کر ہمیں ماررہی ہے جبکہ دوسری طرف وفاقی حکومت واپڈا کے ذریعے اوور بلنگ کرکے غریب کسانوں کو ماررہی ہے ۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ جانور چارہ نہ ملنے کی وجہ سے مرنا شروع ہوچکے ہیں

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں

سوشل میڈیا لنکس