Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

یزید ی قوتوں کے سامنے ڈٹ جانا ہی اہل بیت سے محبت کا تقاضہ ہے ۔ دردنہ صدیقی


کراچی 29؍ستمبر 2017ء:جماعت اسلامی حلقہ خواتین پاکستان کی مرکزی جنرل سیکریٹری محترمہ دردانہ صدیقی نے 10 محرم الحرام شہادت امام حسینؓ کے مو قع پر اپنے ایک خصوصی بیان میں کہا ہے کہ شہادت امام حسینؓ  محض ایک واقعہ ہی نہیں بلکہ یہ ایک تحریک بھی ہے،حسینؓ صرف ایک شخصیت کا نام ہی نہیں بلکہ ایک مجسم تحریک ہے۔ ہمیں دراصل امام حسینؓ  کے مقصدِ شہادت کی اصل روح کو سمجھنے اور واقعہ کربلا کے اصل پیغام کو عام کرنے کی ضرورت ہے۔حق و باطل کا معرکہ ازل سے چلتا رہا ہے،ظلم کے خاتمے کے لئے اور عدل کے نفاذ کے لئے رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کھڑے ہوئے، صحابہ کرام رضوان اللہ علیہم اور اہل بیت نے جانوں کے نذرانے پیش کئے اور یہی تسلسل سیدنا حضرت حسین ؓ کی شہادت میں بھی نظر آ تا ہے انہوں نے کہا کہ حضرت امام حسین ؓ  نے جہاد کا وہ عملی نمونہ پیش کیاجو رہتی دنیا تک کے مسلمانوں کے لئے مشعل راہ ہے۔واقعہ کربلا جہاد بالسیف کی وہ اعلیٰ مثال ہے جو  قیامت تک مسلم امہ کے جذبہ جہاد کو مہمیز دیتا رہے گا۔انہوں نے کہا کہ یزیدی قوتیں آج بھی طاقتور ہیں جن کے سامنے ڈٹ جانا ہی اہلِ بیت سے محبت کا تقاضا ہے۔اج ہمارے ملک میں جہاں حکمران اس قوم کو بیچ کر کھا جاتے ہوں ،معیشت تباہی کے دہانے پر پہنچ چکی ہو ،عوام خودکشیاں کرنے پر مجبور ہوں اور حکمرانوں کی عیاشیوں میں کمی نہ آ تی ہو،فحاشی و عریانی عام ہو تو ان حالات میں رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کا اسوہ اور حضرت حسین رضہ کا اسوہ تقاضا کرتا ہے کہ اس نظام کے خلاف کھڑے ہونا ہے اور ظلم کے خاتمے ،عدل کے نظام اور شریعت کے نفاذ کے لئے اگر جان بھی قربان کرنی پڑے تو دریغ نہیں کرنا۔دراصل یہی امام حسین رضہ کی شہادت کا اصل مقصود ہے۔ دردانہ صدیقی نے مزید  کہا  کہ آج پھر امتِ  مسلمہ کو کسی حسینؓ  کی ضرورت ہے۔ اللہ تعالیٰ سے دعا ہے کہ وہ ہمیں ایسے حکمران عطا فرمائے جو باطل قوتوں کے سامنے نہ جھکیں نہ بکیں، جو ظلم و جور اور فسق و فجور کی آندھیوں کو روک لیں اور جو عدل و انصاف کا پرچم ہاتھ میں لے کر ہر طوفان سے ٹکرا جانے کی صلاحیت رکھتے ہوں۔ آمین۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس