Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

نیب آصف زرداری کی طرح نوازشریف کو بھی ولی اللہ ثابت کرنے پر تلاہواہے ۔سینیٹر سراج الحق


لاہور 11ستمبر 2017 ء:امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ نیب آصف زرداری کی طرح نوازشریف کو بھی ولی اللہ ثابت کرنے پر تلاہواہے ۔ زرداری کی درجنوں آف شو ر کمپنیاں ہیں مگر انہیں کلین چٹ دے دی گئی ہے اور اب نیب نوازشریف سے مک مکا کر رہاہے ۔ نیب کی اب تک کی کاروائی مایوس کن ہے ۔ محض نواز شریف کو ہٹانے سے قوم کا اصل مسئلہ حل نہیں ہوا ۔ جب تک سب لٹیروں کو احتساب کے کٹہرے میں کھڑا نہیں کیا جاتا ، ہماری تحریک جاری رہے گی ۔ نوازشریف میرا مشورہ مان کر مستعفی ہو جاتے تو عزت بچ جاتی ۔ ریفرنس دائر ہونے کے بعد اسحق ڈار کو فوری طور پر استعفیٰ دے دیناچاہیے تھا حکمران عوام کے خون پسینے کی کمائی پر عیش کر رہے ہیں ۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے اپنی قیادت میں لاہور سے اسلام آباد تک احتساب مارچ کے آغاز پر داتا دربار چوک لاہور اور گوجرانوالہ میں بڑے عوامی جلسوں سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ قبل ازیں داتا دربار لاہور سے احتساب مارچ کے شرکا کو شاندار انداز میں اسلام آباد کے لیے روانہ کیا گیا ۔ اس موقع پر سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی لیاقت بلوچ ، ڈاکٹر فرید احمد پراچہ ، امیر العظیم ، جاوید قصوری ، ذکر اللہ مجاہد ، ضیاءالدین انصاری ، محمد اصغر ، حافظ ساجد انور ، بلال قدرت بٹ ، اصغر علی گجر اور محمد انور گوندل بھی موجودتھے ۔ لاہور سے گوجرانوالہ تک کالا شاہ کاکو، مریدکے اور کامونکی میں احتساب مارچ کا زبردست استقبال کیا گیا ۔ کالا شاہ کاکو میں نیشنل لیبر فیڈریشن کے سینکڑوں مزدوروں نے سراج الحق اور دیگر قائدین کو پھولوں کے ہار پہنائے اور کارواں کے شرکاءپر پھولوں کی پتیاں نچھاور کیں ۔ مرید کے میں شیخوپورہ کے ضلعی امیر سرفراز احمد خان کی قیادت میں جماعت اسلامی کے سینکڑوں کارکنوں نے والہانہ استقبال کیا اور شرکاءکو پانی کی بوتلیں دی گئیں ۔احتساب مارچ میں نابینا افراد کے ایک گروپ نے بھی شرکت کی ۔

سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ قوم لٹیروں کے ٹولے کو اقتدار کے ایوانوں کی بجائے جیل کی سلاخوں کے پیچھے دکھنا چاہتی ہے جب تک پانامہ لیکس میں موجود 436 لٹیروں اور بنکوں سے قرضے لے انہیں کنگال کرنے والوں ، شوگر اور ڈرگ مافیا اور سرکاری اثاثوں کو لوٹنے والوں کا احتساب نہیں ہوتا ، ہم چین سے نہیں بیٹھیں گے ۔ انہوں نے کہاکہ نوازشریف کی نااہلی سے کرپشن کا مسئلہ حل نہیں ہو سکا اور جب تک زرداری ، مشرف اور نواز جیسے لوگوں کو قانون کی گرفت میں نہیں لایا جاتا ، کرپشن کا کینسر پھیلتا رہے گا ۔ انہوں نے کہاکہ احتساب کے عمل کو نیب کے ہاتھوں مذاق نہیں بننے دیں گے ۔

گوجرانوالہ پہنچنے پر احتساب مارچ کے شرکاءکا فقید المثال استقبال کیا گیا اور سینیٹر سراج الحق کو بگھی میں بٹھا کر شیراں والا باغ جلسہ گاہ تک لایا گیا جہاں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ 70سال سے ظالم جاگیرداروں ، وڈیروں اور سرمایہ داروں کا ٹولہ عوام کی گردنوں پر سوار ہے اور دونوں ہاتھوں سے قومی وسائل لوٹ رہاہے ۔ یہاں محنت کسان اور مزدور کرتے ہیں اور ان کی محنت کا پھل جاگیردار اور کارخانہ دار کھاتے ہیں ۔ غریب سارا دن محنت مشقت کر نے کے باوجود فاقوں پر مجبور ہے ۔ عام آدمی کو تعلیم ، صحت ، روزگار جیسی بنیادی سہولتیں دستیاب نہیں اور حکمرانوں نے اندرونی و بیرون ملک کرپشن کی کمائی سے بڑے بڑے محل تعمیر کر رکھے ہیں انہوں نے کہاکہ عوام ڈاکوﺅں کے اس گروہ کے ہاتھوں یرغمال ہیں اور اسٹیٹس کو کی قوتوں نے ملک پر ایک استحصالی نظام مسلط کررکھاہے ۔ چوروں کو اقتدار کے ایوانوں سے نکالنے اور عام آدمی پر اقتدار کے ایوانوں کے دروازے کھولنے کے لیے ضروری ہے کہ عوام ایک بڑے انقلاب کے لیے تیار ہو جائےں اور اپنے ووٹ کی قوت سے سیاسی و معاشی دہشتگردوں کا راستہ ہمیشہ کے لیے روک دے ۔ 

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس