Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

اہم خبریں

کرپٹ افرادکو ہٹانے سے ملکی ترقی کی راہ میں رکاوٹ پید انہیں ہوگی۔میاں مقصوداحمد


لاہو11جولائی 2017ء:  امیر جماعت اسلامی پنجاب میاں مقصود احمدنے جے آئی ٹی کی رپورٹ کے مطابق ’’وزیر اعظم اور ان کی فیملی منی ٹریل قانونی طور پرثابت نہیں کرسکی اور شریف خاندان کے اثاثے آمدن سے زیادہ ہیں‘‘پراپنے ردعمل کا اظہارکرتے ہوئے کہاہے کہ جے آئی ٹی کی سپریم کورٹ میں جمع کروائی جانے والی رپورٹ نے ثابت کردیا ہے کہ شریف فیملی نے کرپشن اور منی لانڈرنگ کی ہے۔افسوس ناک امر یہ ہے کہ حکومت جے آئی ٹی کی رپورٹ کو ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت غلط رنگ دے رہی ہے جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔حکمران خاندان پانامالیکس کیس میں بری طرح پھنس چکا ہے۔یہ معاملہ کسی کی ذات کا نہیں بلکہ 20کروڑ عوام کے مستقبل کا ہے۔عوام کومکمل حقائق معلوم ہونے چاہئیں۔انہوں نے کہاکہ حکمرانوں کی لوٹ مار ثابت ہوچکی ہے۔قوم کی نگاہیں سپریم کورٹ پر مرکوزہیں۔امید ہے عدالت عظمیٰ ایسا فیصلہ دے گی جو ملک سے کرپشن کے خاتمہ کا نقطہ آغاز ہوگا۔جے آئی ٹی کی ٹیم نے جس طرح غیر جانبداری کامظاہرہ کرتے ہوئے سچ قوم کے سامنے لایا اس پر پوری قوم ان کی کارکردگی کو سراہتی ہے۔الزامات واضح ہوچکے ہیں،وزیر اعظم اپنے عہدے سے استعفیٰ دے کر عدالتی کارروائی کاسامنا کریں۔نوازشریف اثاثے چھپانے اور قوم سے غلط بیانی کرنے پرآرٹیکل62اور63کے تحت امور حکومت چلانے کے اہل نہیں رہے۔آف شور کمپنی برٹش ورجن آئی لینڈز نے مریم نوازکے’’ بینی فیشل اونر‘‘ ہونے کی توثیق کی ہے۔انہوں نے کہاکہ وزیر خزانہ اسحاق ڈارخود اثاثے چھپانے کے جرم میں ملوث پائے گئے۔جب حکمران طبقہ خود ٹیکس چوری اور منی لانڈرنگ میں ملوث ہوگا توملک وقوم کاکیابنے گا۔حکومت کی جانب سے جے آئی ٹی کی کارکردگی کی رپورٹ کو ردی قراردے کر مسترد کرناقوم کے ساتھ سنگین مذاق کے مترادف ہے۔انہوں نے کہاکہ سیاسی عدم استحکام سے بھرپور انداز میں فائدہ اٹھاتے ہوئے بعض شرپسند عناصر ملک میں انتشار اور افراتفری کی فضا کو بڑھارہے ہیں۔کرپٹ افراد کو ہٹانے سے ملکی ترقی کی راہ میں کوئی رکاوٹ نہیں پیداہوگی۔چند افراد کے جیل جانے سے سسٹم ڈی ریل نہیں ہوگا۔میاں مقصود احمد نے مزیدکہاکہ اب وقت آگیا ہے کہ کرپشن کو جڑ سے اکھاڑ پھینکا جائے۔انگلینڈ کی کمپنیاں نقصان میں ہونے کے باوجود بھاری رقوم کی ہیرپھیر میں مصروف تھیں۔فنڈز سے مہنگی جائدادیں خریدی گئیں۔حدیبیہ ملز،ہیلی کاپٹر خریداری سمیت تمام بند کیسز ری اوپن کیے جائیں۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس