Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

عوام ووٹ کی طاقت سے اپنی تقدیر اور ملک کے حالات بدل سکتے ہیں ۔سراج الحق


 کراچی ؍19مئی 2107ء: امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ عوام اپنے ووٹ کی طاقت سے اپنی تقدیر اور ملک کے حالات بدل سکتے ہیں ، عوام ظلم کے نظام اور اسٹیٹس کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں ، اسلامی پاکستان ہی خوشحال پاکستان کی ضمانت ہے ، جماعت اسلامی کی دعوت محبت کی دعوت ہے ، ہم ایک ایسی حکومت قائم کرنا چاہتے ہیں جہاں حکمران غریب عوام کے خیر خواہ ہوں اور ان کو اپنی تجوریاں بھرنے کے بجائے عوام کے دکھوں اور پریشانیوں کو دور کرنے کی فکر ہو۔ معمار فیسٹیول کا انعقاد اور عوام کے لیے ایک مثبت اور صحت مند تفریح کی فراہمی ایک اچھی اور قابل تقلید کاوش ہے ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعہ کے روز جماعت اسلامی زون گلشن معما رکے زیر اہتمام عید گاہ گراؤنڈ گلشن معمار میں 3روزہ ’’معمار فیملی فیسٹیول ‘‘کے افتتاح کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ سرا ج الحق نے فیسٹیول کا افتتاح کیا اور مختلف اسٹالوں کا دورہ بھی کیا ۔ فیسٹیول میں شرکاء پنی فیملی کے ہمراہ شریک ہوئے جن میں خواتین اور بچوں کی بڑی تعداد شامل تھیں۔فیسٹیول اتوار تک جاری رہے گا۔ اس موقع پر جماعت اسلامی گلشن معمار زون کے امیر رضوان شاہ نے بھی خطاب کیا۔سراج الحق نے بچوں اور بچیوں میں عید گفٹ بھی تقسیم کیے۔سراج الحق نے کہا کہ میں اس خوبصورت اور پر اثر پروگرام کے انعقاد پر ضلع وسطی اور گلشن معمار کے امراء اور ٹیم کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔جماعت اسلامی نے نفرتوں ، تعصبات ، مادہ پرستی کے ماحول میں ایک ایسا لمحہ مہیا کیا ہے جہاں لوگ اپنے فیملی کے ہمراہ کچھ وقت کے لیے خوش ہورہے ہیں۔پوری امت ایک گلدستہ ہے اور آج کے پروگرام میں بھی سب ایک گلدستے کی صورت میں شریک ہیں۔جماعت اسلامی کی دعوت نفرت کے خلاف اور محبت کی دعوت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم امتی ہوکر جینا اور مرنا چاہتے ہیں نفرتوں اور تعصبات کے بتوں کو توڑ کر ایک وحدت کی طرح زندگی گزاریں۔ جو لوگ امت اور مسلمانوں کو تقسیم کرنا چاہتے ہیں وہ آستین کا سانپ ہیں۔ ان کا نام تو مسلمان جیسا ہے لیکن وہ مسلمانوں کے دشمن ہیں ۔ ہمیں کوئی فوج یا ایٹم بم نہیں بچاسکتا صرف کلمہ لاالہ الا اللہ کی طاقت اور قوت ہمیں بچاسکتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم ایسی دنیا اور معاشرہ بنانا چاہتے ہیں جہاں ایک انسان دوسرے کا غلام نہ ہو جس میں غربت ،مہنگائی ، بے روزگاری کرپشن نہ ہو ، جس میں عوام کے مسائل حل ہوں ۔ حرام کے درواز ے بند ہوں۔ حلال کے دروازے کھلے ہوں،جس میں جھوٹ کے دروازے بند ہوں، سچائی کے دروازے کھلے ہوں شریعت کے مطابق فیصلے ہوں۔حکمران عوام کے خیر خواہ ہوں اور کمزوروں ، مظلوموں ، محروموں اور مجبوروں کا زیادہ خیال رکھنے والے ہوں ۔ جہاں لوگ خود کشی کرنے اور گردے فروخت کرنے پر مجبور نہ ہوں ۔ عدالت انصاف دینے والی ہو اور عوام کے دروزے پر عوام کو انصاف ملے ۔حکومت عوام کی وکیل ہو اور مظلوم کی طاقت حکومت بنے۔ایک ماں کی طرح محبت کرنے والی حکومت ہو۔ہم ایک ایسی حکومت بنانے کے لیے جدوجہد کررہے ہیں ۔ عوام جماعت اسلامی کا ساتھ دیں ۔عوام مل کر ایک اسلامی حکومت کے قیام کی جدوجہد میں اپنا حصہ ڈالیں ۔ہر پاکستانی کے پاس اس کے ووٹ کی صورت میں اس کے پاس بہت بڑی طاقت ہے اور یہ ووٹ کی طاقت ایٹم بم سے زیادہ بڑی طاقت ہے ۔عوام ووٹ کی طاقت سے اپنی تقدیر اور ملک کے حالات بدلیں ۔ عوام کرپٹ حکمرانوں اور عوام کا خون چوسنے والوں کو اپنے ووٹ کی طاقت سے شکست دیں ۔ظلم اور انصاف ایک جگہ جمع نہیں ہوسکتے ۔ عوام اس نظام بد اور اسٹیٹس کو کو ختم کرنے کے لیے اٹھ کھڑے ہوں اور ایک زبان ہوکر اعلان کریں کہ اس ظلم کے نظام اور اسٹیٹس کو کو جانا ہوگا ۔نظام مصطفی آئے گا تو ظلم اور ناانصافی ختم ہوگی ۔ انہوں نے کہا کہ کے الیکٹرک کے خلاف عوام نے زبردست احتجاج کیا لیکن حکمران اندھے ، گونگے اور بہرے بنے ہوئے ہیں ان کے کانوں پر جوں تک رینگتی ۔ان حکمرانوں کو عوام پر ظلم اور زیادتی نظر نہیں آتی ۔ عوام کو بجلی ، پانی اور روزگار میسر نہیں ہے لیکن حکمرانوں کو اس سے کوئی سروکار نہیں ان کو صرف اپنی تجوریوں کو بھرنے کی فکر ہے ۔رضوان شاہ نے کہا کہ جماعت اسلامی کئی سالوں سے گلشن معمار میں فیملی فیسٹیول کا انعقاد کررہی ہے ، ہمارا یہ فیسٹیول کوئی ناچ گانے یا صرف رنگوں کی دنیا دکھانے کے لیے نہیں ہے بلکہ یہ مثبت اور صحت مند تفریحی ایونٹ ہے جو جماعت اسلامی کی دعوت کو پہنچا رہا ہے ۔ ہم نے یہ ایونٹ کر کے ثابت کردیا ہے کہ ہم جس طرح صوبہ خیبر پختون خواہ میں ایک ایماندار اور اہل وزیر خزانہ اور وزیر بلدیات دے سکتے ہیں تو ہمیں اگر موقع ملا تو ہم عوام کے لیے ایک اچھی تفریح فراہم کرنے کی بھی صلاحیت رکھتے ہیں ۔فیسٹیول میں گلشن معمارکے عوام نے گہری دلچسپی کا اظہار کیا اور جماعت اسلامی کی کوششوں کو سراہا ۔ فیسٹیول میں خواتین ، بچوں اور نوجوانوں کی دلچسپی کے حوالے سے بڑے پیمانے پر انتظامات کیے گئے تھے ۔ بڑی تعداد میں فوڈ کارنر ، کتابوں ، کپڑوں اور دیگر مصنوعات کے اسٹالز ، خواتین کے لیے بوتیک ، بچوں کے لیے وسیع پلے لینڈ جن میں الیکٹرانک جھولے ، موت کا کنواں اور دیگر چیزیں شامل تھیں۔قبل ازیں سراج الحق کا گلشن معمار آمد کے موقع پر سپر ہائی وے معمار موڑ پر شاندار استقبال کیا گیا ۔ پھولوں کی پتیاں نچھاور کی گئیں اور خیر مقدمی نعرے لگائے گئے ۔ نوجوانوں میں زبردست جوش و خروش دیکھنے میں آیا اور معمار موڑ سے عید گاہ گراؤنڈ تک ان کو ایک بڑے جلوس کی صورت میں لایا گیا ۔سراج الحق کی ’’معمار فیملی فیسٹیول ‘‘آمدپر آتش بازی بھی کی گئی۔ان کے ہمراہ امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمن ، سکریٹری کراچی عبد الوہاب ، ضلع وسطی کے امیر منعم ظفر خان ، گلشن معمار زون کے امیر رضوان شاہ اور دیگر بھی موجود تھے ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس