Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

جوائنٹ کمیشن با اختیار بنا یا جائے تاکہ کرپشن زدہ حکمرانوں کو راہ فرار نہ ملے ۔ذکراللہ مجاہد


 لاہور20 اپریل 2017ء: امیر جماعت اسلامی لاہور ذکراللہ مجاہد نے پانامہ کیس کے نتائج کے بعد اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ حکمران اخلاقی طور جوائنٹ کمیشن کے فیصلے تک اقتدار چھوڑ دیں ۔حکمرانوں کی کرپشن کا پرادہ فاش کرنے کے لیے تحقیقاتی جوائنٹ کمیشن کو بااختیار بنا یا جائے تاکہ کرپشن زدہ حکمرانوں کو راہ فرار نہ ملے ۔ان خیالات کا اظہار گذشتہ روز انہوں نے میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کے دوران کیا ۔انہوں نے کہا کہ ملک کے معاشی ، معاشرتی اورنظریاتی مسائل کی سب سے بڑی وجہ کرپشن ہے جو ملک کے سرکاری اور نیم سرکاری اداروں میں کینسر کی طرح سرایت کر چکی ہے ۔انہوں نے کہا کہ کرپشن اس ملک کی سب سے بڑی لعنت ہے اسے آہنی ہاتھوں سے ختم کر کے قیام پاکستان کے مقاصدکو پورا کیا جا سکتا ہے ۔انہوں نے پانامہ لیکس کیس کے عدالتی فیصلے میں دو جج حضرات نے تسلیم کیا ہے کہ موجودہ حکمران کرپشن سکینڈل میں ملوث ہونے کے ناطے نااہل ہوچکے ہیں اگر ملک میں حقیقی جمہوریت ہوتی تو آج حکمران کرپشن سکینڈل میں ملوث ثابت ہونے کے بعد اقتدارسے علیحدگی اختیار کرتے مگر ایسا نہیں ہوا ۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں خاندانی سیاست کے نتیجے میں مسلسل غربت اور بے روزگاری میں اضافہ ہو رہا ہے ۔نوجوان بے حیائی ، بے مقصدیت ، نشہ ، چوری و ڈکیتی اور اغوا برائے تائون جیسے جرائم میں مبتلا ہو رہے ہیں جبکہ ملک میں تعلیم و صحت اورامن وامان قائم کرنے والے ادارے کرپشن اور کرپٹ نظام کی وجہ سے تباہ حالی کا شکار ہوچکے ہیں ۔ذکر اللہ مجاہد نے کہا کہ 2018ء کے الیکشن میں عوام کو کرپشن زدہ حکمرانوں اور فرسودہ نظام سے جان چھڑوانا ہو گی تاکہ اس ہولناک مہنگائی و بے روزگاری ، لوڈشیڈنگ جیسے مسائل سے چھٹکارا حاصل کیا جا سکے اور عوام کرپشن سے پاک اہل ، دیانت دار ، جرات مند بے داغ کردار کی حامل قیادت کا ساتھ دے۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس