Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

آزاد،باوقار،خود مختارپاکستان


ہم اپنی خارجہ ،داخلہ اور معاشی پالیسیوں میں بنیادی اور انقلابی تبدیلوں کے ذریعہ پاکستان کو حقیقی معنوں میں آزاد ،مکمل طور پر خود مختار اور عالم اسلام کی قیادت کرتاایک ترقی یافتہ ، جدید ،مضبوط اور باوقار پاکستان بنائیں گے اس مقصد کے لیے حسب ذیل اہم اقدامات کیے جائیں گے ۔
• آئی ایم ایف سمیت بیرونی قرضوں پر معیشت کا انحصار ختم کیا جائے گا اور وسائل کے حصول کے لیے اندرون ملک اور بیرون ملک پاکستانیوں کے وسائل کو موثر طریقے سے بروئے کار لایا جائے گا۔
• تمام بین الاقوامی معاہدات پارلیمان کے توسط سے کئے جائیں گے۔
• تمام ممالک کے ساتھ برابری، انصاف ،پُر امن بقائے باہمی اور عدم مداخلت کی بنیاد پر تعلقات استوار کئے جائیں گے۔
• مسلم اُمہ کے اتحاد کے لیے خصوصی کردار ادا کیا جائے گا، مسلم ممالک کی مشترکہ پارلیمنٹ ،مشترکہ دفاع اور مشترکہ منڈی کے قیام کے لیے کوشش کی جائے گی نیز اُمہ کی سطح پر قرآنِ پاک، ناموسِ رسالت صلی اللہ علیہ و سلم اور اسلامی شعائر کے تحفظ کے لیے بشمول او آئی سی تمام اداروں اور قوتوں کو متحرک کیا جائے گا۔
• ہمسایہ ملک چین سے تعلقات کو مزید فروغ دیا جائے گا اور زندگی کے تمام شعبوں میں باہمی تعاون کی راہیں تلاش کی جائیں گی۔
• بھارت کے ساتھ متنازعہ اُمور با مقصد ، جامع اور نتیجہ خیز مذاکرات کے ذریعے حل کئے جائیں گے۔ اس سلسلے میں تمام متعلقہ بین الاقوامی اداروں سے رجوع کرنے کے ساتھ ساتھ دیگر ممالک کی رائے بھی اپنے حق میں ہموار کرنے کی پوری کوشش کی جائے گی۔
• کشمیر کی بھارت سے آزادی ہماری خارجہ پالیسی کا اہم ستون ہے۔ ہم گزشتہ سات عشروں سے جاری جدوجہد ا ٓزادی کو تحسین کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔ ہمارا پختہ یقین ہے کہ ان کی لازوال قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی۔ ہمارے نزدیک مسئلہ کشمیر کا واحد حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کی روشنی میں رائے شماری ہی ہے۔ اس ہدف کے حصول کے لیے اسلامیانِ کشمیر کی مکمل سیاسی، اخلاقی اور سفارتی مدد کرنا اپنا فرض اولین سمجھتے ہیں۔
 

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں









سوشل میڈیا لنکس