Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

مزدوردوست لیبرپالیسی،نجکاری


          جماعت اسلامی کی حکومت صنعتی ترقی کی حوصلہ افزائی کے ساتھ ساتھ لیبر پالیسی کی نئی تشکیل کرے گی۔

٭۔      صنعتی اداروں کے منافع میں مزدوروں کو مناسب حصہ دیا جائے گا

٭۔     مزدوروں اور کارکنوں کی اجرتیں اور معاوضے منصفانہ اور مناسب ہوں گے اور انڈیکیشن کے اصول کے تحت ہر سال افراطِ زر اور قیمتوں کے مطابق اجرتوں پر نظر ثانی کی جائے گی۔

٭۔     منافع بخش صنعتوں اور حساس مالی و صنعتی اداروں کی نج کاری سے گریز کیا جائے ، اور جن اداروں کی نج کاری نامناسب شرائط یا انتہائی کم قیمت پر ہوئی ہے ان پر نظر ثانی کی جائے گی۔ نیز نجکاری اس انداز میں کی جائے گی جس سے اجارہ داری اور استحصال نہ ہو ۔

٭۔      نجکاری میں متعلقہ ادارہ کے کارکنوں کو ہرحال میں ترجیح دی جائے گی اور ان کے مفادات کا تحفظ کیا جائے گا۔

٭ ۔      نج کاری کی آمدنی قرضوں کی ادائیگی اور تعلیم و صحت عامہ سے متعلق فلاحی منصوبوں پر خرچ کی جائے گی۔

٭۔     آجر اور اجیر کے بہتر تعلقات اور اصلاح کار کے لئے انجمن سازی اور یونین کی اجازت دی جائے گی۔

٭۔     بجٹ سازی ، نج کاری اور دیگر معاملات کے لئے ٹریڈ یونین رہنماں سے مشاورت ضروری قرار دی جائے گی۔

٭۔     افرادی قوت کے بہترین استعمال کے لئے کارکنوں کی تعلیم و تربیت کا نظام رائج کیا جائے گا۔

٭۔     لیبر عدالتوں کی کارکردگی کو بہتر بنایا جائے گا۔

٭۔     مزدوروں کو رہائشی اور علاج کی سہولیات فراہم کی جائیں گی اور ان کے بچوں کی مفت تعلیم کا انتظام کیا جائے گا۔

٭۔     بعد از ملازمت ، مزدور کی پنشن کا نظام نافذ کیا جائے گا۔

٭۔     سرکاری اور نجی شعبہ میں ٹھیکہ داری نظام ختم کردیا جائے گا۔

٭۔      مزدوروں کی پیشہ وارانہ تربیت کا خصوصی انتظام کیا جائے گا۔

٭       مزدوروں کی بہبود کے فنڈز قوانین پر نظرثانی کرکے صرف مزدوروں کے مفا د میں استعمال کیے جائیں گے اوران کے غلط استعمال کو روکا جائے گا۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں







سوشل میڈیا لنکس