Jamaat-e-Islami Pakistan | English |

دریائے راوی میں پیدا ہونے والی آلودگی اور تعفن کا فوری طور پر تدارک کیا جائے ۔فریداحمدپراچہ

  1.  لاہور 28مارچ2017ء: نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان ڈاکٹر فرید احمد پراچہ نے اپنے ایک بیان میں حکومت پنجاب سے مطالبہ کیاہے کہ دریائے راوی میں سیوریج کے پانی سے پیدا ہونے والی آلودگی اور تعفن کا فوری طور پر تدارک کیا جائے ۔انہوں نے کہاکہ گندے پانی سے دریا کے کنارے جتنی بستیاں ہیں ، ان میں موذی امراض پھیل گئے ہیں ۔ زیر زمین پانی بھی اتنا آلودہ اور زہریلا ہو چکاہے کہ پینے کے قابل تو کجا اس سے کپڑے بھی نہیں دھوئے جاسکتے اور نہ ہی غسل کیا جاسکتاہے ۔ زیر زمین پانی کی سطح اتنی نیچے چلی گئی ہے کہ 200 فٹ تک بھی پانی دستیاب نہیں ہے ۔
    ڈاکٹر فرید احمد پراچہ نے تجویز پیش کی ہے کہ ہیڈ مرالہ سے کچھ پانی دریائے راوی میں چھوڑ دیا جائے تو یہ مسئلہ کسی حد تک حل ہوسکتاہے ۔ اگر اس نہر H.R کے ذریعے کچھ پانی دریائے راوی سے گزارا جائے تواس سے راوی میں موجود گندگی اور تعفن دور ہوسکتاہے ۔ یہی پانی ہیڈ بلوکی جا کر قادر آباد بلوکی لنک کینال میں دوبارہ شامل ہو جائے گا ۔ انہوں نے یہ مطالبہ بھی کیا کہ راوی میں سیوریج کنکشنز پر پابندی لگادی جائے اس طرح بھی مسئلہ کا فی حد تک حل ہوسکتاہے ۔

 
 
 
 
     ^واپس اوپر جائیں

سوشل میڈیا لنکس